اسپین: پوتن انرجی لوڈ شیڈنگ کو بطور اسلحہ استعمال کریں گے

روس کے صدر ولادی میر پوتن "انرجی لوڈ شیڈنگ کو بین الاقوامی برادری کے خلاف ایک نئے اسلحے کے طور پر استعمال کریں گے لہٰذا دشواریوں سے بھرپور موسم سرما ہمارا منتظر ہے: وزیر دفاع مارگریٹا روبلز

1868669
اسپین: پوتن انرجی لوڈ شیڈنگ کو بطور اسلحہ استعمال کریں گے

اسپین کی وزیر دفاع مارگریٹا روبلز نے کہا ہے کہ "روس کے صدر ولادی میر پوتن "انرجی لوڈ شیڈنگ کو بین الاقوامی برادری کے خلاف ایک نئے اسلحے کے طور پر استعمال کریں گے لہٰذا دشواریوں سے بھرپور موسم سرما ہمارا منتظر ہے"۔

روبلز نے برگوس میں مسلح فورسز  ہیڈ کوارٹر  کے دورے کے دوران اخباری نمائندوں کے لئے بیان جاری کیا ہے۔ بیان میں انہوں نے روس کے یوکرین پر حملوں اور ان حملوں کے نتائج کے مقابل "باہمی اتحاد و تعاون" کی اپیل کی ہے۔

واضح رہے کہ اسپین میں بائیں کولیشن  کی حکومت  کے قبول کردہ اور 10 اگست سے نافذ العمل انرجی بچت پلان کی رُو سے سرکاری عمارتوں، تجارتی علاقوں، شاپنگ سینٹروں، ائیر پورٹوں، ریلوے اسٹیشنوں  اور بس اڈوں ، ثقافتی مراکز اور  ہوٹلوں میں پورے موسمِ گرما میں ائیر کنڈیشنوں کو 27 درجے تک رکھا جائے گا  اور شام 10 بجے کے بعد سرکاری عمارتوں،  مارکیٹوں اور خریداری مراکز کی روشنیاں گُل کر دی جائیں گی۔

پلان کے مطابق موسمِ سرما میں ہیٹنگ کو بھی 19 درجے تک رکھاجائے گا ۔ یہ اطلاق یکم نومبر 2023 تک جاری رہے گا۔



متعللقہ خبریں