لیبیا  قومی  مفاہمتی حکومت نے برلن کانفرنس میں قطر کو بھی مدعو کرنے کا مطالبہ کردیا

لیبیا  کے  احرار چینل کے مطابق ، اقوام   متحدہ   کی نگرانی  میں  قانونی  حکومت  کی وزارت خارجہ  نے طرابلس میں جرمن سفارت خانے کو  ایک پیغام  روانہ کیا ہے

1342672
لیبیا  قومی  مفاہمتی حکومت نے برلن کانفرنس میں قطر کو بھی مدعو کرنے کا مطالبہ کردیا

لیبیا میں  قومی  مفاہمت حکومت نے   جرمنی کے دارالحکومت برلن میں لیبیا سے متعلق بین الاقوامی کانفرنس میں  تیونس اور قطر کو  بھی مدعو کرنے   کا مطالبہ کیا ہے۔

لیبیا  کے  احرار چینل کے مطابق ، اقوام   متحدہ   کی نگرانی  میں  قانونی  حکومت  کی وزارت خارجہ  نے طرابلس میں جرمن سفارت خانے کو  ایک پیغام  روانہ کیا ہے۔

اس پیغام میں کہا گیا ہے کہ   لیبیا  میں معمر قذافی حکومت  کے  2011 میں تختہ الٹنے کے بعد    ہزاروں  بے گھر افراد   کی امداد  میں  قطر  نے بڑا اہم کردارا ادا کیا ہے جس کی وجہ سے اس کانفرنس میں  قطر  کو بھی  مدعو کرنے کی ضرورت ہے ۔

قانونی حکومت  کی  وزارت خارجہ نے اس بات پر زور دیا کہ برلن کانفرنس میں تیونس اور قطر کی شرکت،  امن مذاکرات  میں  لیبیا میں سلامتی اور استحکام کے قیام میں  ممدو معاون ثابت ہوگی۔

جرمنی کی چانسلر انگیلا میرکل نے اتوار 19 جنوری کو برلن میں لیبیا کانفرنس میں حکومتی  اور مملکتی  سربراہان   کو مدعو کررکھا ہے۔

اس کانفرنس میں ترکی، امریکہ، روس، برطانیہ، فرانس، چین، متحدہ عرب امارات، کانگو، اٹلی، مصر، الجزائر، اقوام متحدہ، یورپی یونین ، افریقی یونین اور عرب لیگ کے نمائندے شرکت کریں گے۔ قانونی حکومت کے  مشرقی لیبیا میں غیر قانونی  مسلح  قوتوں کے   رہنما ، خلیفہ بعد کو بھی کانفرنس میں مدعو کیا  گیا ہے۔



متعللقہ خبریں