برطانوی شاہی خاندان نے پہلا قدم اٹھا لیا

ملکہ الزبتھ دوئم نے ہیری اور میگان بحران کے حل کے لئے سوموار کے دن خاندانی اجلاس طلب کر لیا

برطانوی شاہی خاندان نے پہلا قدم اٹھا لیا

سسکس کے ڈیوک پرنس ہیری اور ان کی اہلیہ ڈچز میگان مارکل  کی طرف سے محل کے فرائض سے دستبرداری کے اعلان کے بعد برطانوی شاہی خاندان نے پہلا قدم اٹھا لیا ہے۔

اطلاع کے مطابق ملکہ الزبتھ دوئم نے ہیری اور میگان بحران کے حل کے لئے سوموار کے دن خاندانی اجلاس طلب کیا ہے۔

اجلاس میں پرنس آف ویلز شہزادہ چارلس، کیمبریج کے ڈیوک پرنس ولئیم اور سسکس کے ڈیوک پرنس ہیری شرکت کریں گے۔

اجلاس میں پرنس ہیری اور میگان کو ان کے فیصلے سے باز رکھنے کے لئے تجاویز پیش کی جائیں گی۔

ملکہ الزبتھ دوئم کی سینڈریگھم کی رہائش گاہ پر متوقع یہ اجلاس حالیہ دنوں میں شاہی خاندان کے تمام اراکین کا پہلا مشترکہ اجلاس ہو گا۔

مذاکرات میں نوجوان جوڑے کی مالی اور سکیورٹی صورتحال پر بھی غور کیا جائے گا۔

اس واقعے کی وجہ سے پہلی دفعہ شاہی خاندان کے کسی اجتماع سے رائے عامہ کو مطلع کیا گیا ہے۔ اس سے قبل شاہی خاندان کے اجلاسوں کو ذرائع ابلاغ اور رائے عامہ سے مخفی  رکھا جاتا تھا۔



متعللقہ خبریں