قرآنِ کریم کو نذر آتش کیے جانے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

ڈنمارک میں یکجا ہونےو الی 24 شہری تنظیموں کے  کارندوں نے قرآنِ کریم اور مقدس کتابوں کے احترام میں ایک جلوس نکالا

قرآنِ کریم کو نذر آتش کیے جانے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

ڈنمارک میں احتجاجی جلوس نکالنے والے مسلمانوں نے انتہائی دائیں باوز کی پارٹی سٹرام کرس کے لیڈر راسموس پالودان  کی جانب سے قرآن ِ کریم کو نذرِ آتش کرنے پر رد عمل  کا مظاہرہ کیا۔

ڈنمارک میں یکجا ہونےو الی 24 شہری تنظیموں کے  کارندوں نے قرآنِ کریم اور مقدس کتابوں کے احترام میں ایک جلوس نکالا۔

اس دوران نعرے اور تکبیر بلند کرنے والے گروہ نے شہر کے مشہور چوک تک  پہنچنے کے بعد اذان سنی اور بعض تقریروں کے ساتھ اس مظاہرے کو پر امن طریقے سے نکتہ پذیر کیا۔

اس مظاہرے کی حمایت کرنے والی مقامی شہری تنظیموں کے  نمائندوں نے قرآنِ کریم سمیت تمام تر مقدس  کتابوں  کی بے حرمتی پر پابندی عائد کیے جانے اور دو برس قبل کالعدم قرار دیے جانے والے "عقیدےکی تحقیر" قانون کو دوبارہ نافذ العمل کیے جانے کے لیے دستخط جمع کیے۔ جنہیں سیاستدانوں تک پہنچائے جانے کی اطلاع دی گئی ہے۔

 



متعللقہ خبریں