امریکہ کی طرف سے اضافی کسٹم ڈیوٹی کی صورت میں یورپی یونین بھی جوابی کاروائی کرے گی: سلیسیا مالمسٹروم

امریکہ کے درآمدی گاڑیوں پر اضافی کسٹم ڈیوٹی لگانے کی صورت میں یورپی یونین کی طرف سے بھی 20 بلین ڈالر مالیت کسٹم ڈیوٹی کی جوابی  کاروائی تیار ہے: سلیسیا مالمسٹروم

1019425
امریکہ کی طرف سے اضافی کسٹم ڈیوٹی کی صورت میں یورپی یونین بھی جوابی کاروائی کرے گی: سلیسیا مالمسٹروم

یورپی یونین کمیشن  کے تجارتی امور کی ہائی کمشنر سلیسیا مالمسٹروم نے کہا ہے کہ امریکہ کے درآمدی گاڑیوں پر اضافی کسٹم ڈیوٹی لگانے کی صورت میں یورپی یونین کی طرف سے بھی 20 بلین ڈالر مالیت کسٹم ڈیوٹی کی جوابی  کاروائی تیار  ہے۔

سوٹزر لینڈ کے روزنامہ  ڈیگنز نیہٹر  کے لئے جاری کردہ بیان میں مالمسٹروم نے کہا ہے کہ  یورپی یونین کمیشن کثیر تعداد میں امریکی مصنوعات  کے لئے 20 بلین ڈالر  کسٹم ڈیوٹی کی ایک طویل فہرست تیار کر رہا ہے لیکن ہمیں امید ہے کہ اس کی ضرورت نہیں پڑے گی اور ہم کوئی حل تلاش کر لیں گے۔

انہوں نے کہا ہے کہ مذکورہ جوابی کسٹم ڈیوٹی امریکہ کی کسی  ریاست کو ہدف نہیں بنائے گی بلکہ زراعت، مشنری اور ہائی ٹیکنالوجی جیسی مختلف مصنوعات کا احاطہ کرے گی۔

یورپی یونین کمیشن کے  بجٹ کے ذمہ دار رکن  گنتھا اوتینا  نے جرمنی کے نشریاتی ادارے ڈوچ لنفنک کے لئے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ یورپی یونین  کے تمام سیکٹروں  پر لگائی گئی کسٹم ڈیوٹیوں کے خاتمے کے لئے ہم مذاکرات کرنے کے لئے تیار ہیں لیکن یہ صرف  اسٹیل اور ایلومینیم  کے لئے لگائی گئی کسٹم ڈیوٹیوں کو ہٹائے جانے کی صورت میں ہی ممکن ہے۔

اوتینا  نے کہا کہ ہم امریکہ اور یورپی یونین کے درمیان تجارتی عدم مفاہمت  اور تجارتی جنگ  کے سدباب  کے خواہش مند ہیں۔ اگر موجودہ کسٹم ڈیوٹی کو ختم کیا جاتا ہے تو ہم سرعت سے مذاکرات شروع کر سکتے ہیں اور نرم  ٹرانس اٹلانٹک  تجارت اور سرمایہ کاری شراکت داری پر سمجھوتہ کر سکتے ہیں۔  



متعللقہ خبریں