ہم دہشت گردوں کے ساتھ ہمارے شہریوں کے خون کے ہر قطرے کا احتساب کریں گے، صدر ایردوان

'ہم رات کو اچانک حملہ کر دیں گے کے منشور کو  ہمارے ملک کی بقا  کو خطرے میں ڈالنے والوں کے دلوں میں  خوف پیدا کرنے کے عمل کو جاری رکھیں گے۔

2047613
ہم دہشت گردوں کے ساتھ ہمارے شہریوں کے خون کے ہر قطرے کا احتساب کریں گے، صدر ایردوان

صدر رجب طیب ایردوان نے کہا کہ وہ ان لوگوں کے سامنے نہیں جھکیں گے جو دہشت گرد تنظیموں کو استعمال کرکے انہیں گھیرنے کی کوشش کرتے ہیں۔

آک  پارٹی کے چیئرمین اور صدر ترکیہ  ایردوان نے دارالحکومت انقرہ میں ان کی پارٹی کے چوتھے ہنگامی  کنونشن سے قبل  کے ہال کے سامنے جمع ہونے والے شہریوں سے خطاب کیا۔

یہ بتاتے ہوئے  کہ ہم  نے پارٹی کی 22 سالہ تاریخ میں (مئی کے عام انتخابات میں) 17ویں انتخابی کامیابی حاصل کی، ایردوان نے اس بات پر زور دیا کہ وہ مختلف مشکلات کا سامنا کرنے کے باوجود ترکیہ کو اس کے مقاصد تک پہنچانے کے لیے پرعزم ہیں۔

جناب ایردوان نے کہا کہ "ہم ان لوگوں پر توجہ نہیں دیتے جو ہمیں ڈرانا چاہتے ہیں۔ ہم ان لوگوں کو مراعات نہیں دیتے جو ہمیں اپنی لاٹھیاں دکھاتے ہیں۔ ہم ان لوگوں کے سامنے نہیں جھکتے جو دہشت گرد تنظیموں کا استعمال کرکے ہمیں گھیرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ ترکیہ  کسی بھی قیمت پر مفادات اور سلامتی کے تقاضے پر سمجھوتہ نہیں کرتا۔"

صدر ایردوان نے کنونشن سے خطاب میں  مندرجہ ذیل بیانات دیے: "ہم دہشت گردی کو اس کے جڑ سے ختم کرنے کی اپنی حکمت عملی پر پوری عزم سے عمل درآمد کریں گے، اور ہم پی کے کے، فیتو اور  داعش  کی طرف سے  بہائے گئے خون کے ہر قطرے کا  احتساب کریں  گے۔ ہم اس خوف کو کبھی کم نہیں کریں گے کہ 'ہم رات کو اچانک حملہ کر دیں گے کے منشور کو  ہمارے ملک کی بقا  کو خطرے میں ڈالنے والوں کے دلوں میں  خوف پیدا کرنے کے عمل کو جاری رکھیں گے۔ مشرق وسطیٰ سے قفقاز تک، خطہ  بلقان سے بحیرہ اسود تک خونریزی کو روکنا "ہمارا ترجیحی ایجنڈا ہے۔"



متعللقہ خبریں