علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم PKK/YPG نے شمالی شام میں ایک اور بچے کو اغوا کر لیا

سیکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم شامی حکومت اور ایرانی ملیشیا کے فوجی کیمپوں میں اغوا کیے گئے بچوں کو ہتھیاراستعمال کرنے  کی تربیت دی جاتی رہی ہے

1741892
علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم PKK/YPG نے شمالی شام میں ایک اور بچے کو اغوا کر لیا

علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم PKK/YPG نے شمالی شام میں ایک اور بچے کو اغوا کر لیا ہے۔

سیکیورٹی ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ PKK/YPG نے شام کے حسیکہ شہر کے کیبکا گاؤں میں حامد احمد نامی ایک اور 13 سالہ لڑکے کو اغوا  کرلیا ہے۔

گزشتہ  ہفتے، PKK/YPG کے دہشت گردوں نے 15 سال کی عمر کی 3 لڑکیوں کو آمودہ میں اغوا کر لیاتھا۔

سیکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم شامی حکومت اور ایرانی ملیشیا کے فوجی کیمپوں میں اغوا کیے گئے بچوں کو ہتھیاراستعمال کرنے  کی تربیت دی جاتی رہی ہے۔

اغوا کیے گئے بچوں میں سے کچھ کو عراق میں قندیل اور سنجار لے جایا گیا، جب کہ دیگر کو شام میں تربیت دی گئی اور اگلے مورچوں پر لے جایا گیا۔

علاقائی ذرائع کے مطابق بچوں کے اغوا کے واقعات کے بارے میں  لوگوں  کے  ردعمل میں اضافہ ہوا ہے۔

 

PKK/YPG دہشت گرد تنظیم نے گزشتہ ایک یا دو ہفتوں میں قمشلی، آمودے اور حلب کے شہروں میں 9 بچوں کو اغوا کیا، اور اغوا کیے گئے بچوں کو مسلح کیا گیا اور انہیں نظریاتی اور عسکری تربیت دی گئی۔ اس کے علاوہ، بین الاقوامی انسانی حقوق کی تنظیموں سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ PKK/YPG کی ان غیر قانونی سرگرمیوں کو بے نقاب اور روکنے کے لیے کارروائی کریں۔



متعللقہ خبریں