ہم جرمنی کے ساتھ 50 ارب ڈالر کے تجارتی حجم تک پہنچنا چاہتے ہیں، صدر ایردوان

جرمنی میں ترک کمیونٹی دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کا سماجی پہلو ہے

1720577
ہم جرمنی کے ساتھ 50 ارب ڈالر کے تجارتی حجم تک پہنچنا چاہتے ہیں، صدر ایردوان

صدر رجب طیب ایردوان نے کہا کہ ہم جرمنی کے ساتھ 50 ارب ڈالر کے تجارتی حجم تک پہنچنا چاہتے ہیں۔

صدر ایردوان نے استنبول کے ہوبر مینشن میں جرمن چانسلر انگیلا مرکل سے ملاقات کی۔

ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس میں، ایردواان نے کہا:"محترمہ مرکل کے ساتھ آج کی ملاقاتوں میں، ہم نے اپنے ایجنڈے کے مسائل، خاص طور پر ہمارے دو طرفہ تعلقات پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔‘‘

اس بات کا اظہار کرتے ہوئے جناب ایردوان نے کہا  کہ جرمنی میں ترک کمیونٹی دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کا سماجی پہلو ہے۔"نسل پرستی ، اسلام اور زینوفوبیا اور امتیازی سلوک بدقسمتی سے یورپ میں ترک معاشرے کے اہم مسائل ہیں۔"

صدر ایردوان نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ جرمن چانسلر انگیلا مرکل جو اپنے وزارت عظمیٰ کے الوداعی دورے کے ایک حصے کے طور پر ترکی آئی تھی ، ترک جرمن دوستی میں اہم کردار ادا کریں گی۔

"مجھے امید ہے کہ میرکل کے ساتھ ہم نے جو کامیاب کام کیا ہے وہ نئی انتظامیہ کے ساتھ جاری رہے گا۔ ترکی کی حیثیت سے ، ہم یورپی یونین میں مکمل رکنیت کے راستے میں مرکل کی شراکت کو ہمیشہ یاد رکھیں گے۔

صدر ایردوان مہاجرین کے مسئلے پر"ترکی اس مسئلےکے مرکز میں ہے۔ ہمارے لیے یہ ممکن نہیں کہ ہم ان لوگوں کو دور کردیں جیسا کہ یونان نے کیا۔ ہماری میزبانی جاری رہے گی۔ ہم نقل مکانی  کو قبول کرتے ہیں جیسا کہ ہم نے اب تک کیا ہے۔

غیر قانونی امیگریشن کے حوالے سے جرمن چانسلر مرکل نے کہا،"میں نے کہا کہ یورپی یونین کی اس سلسلے میں ترکی کی حمایت جاری رہے گی۔ ہم انسانی سمگلنگ کو روکنا چاہتے ہیں۔ یہ ایک ضرورت اور شرط ہے کہ یورپی یونین اس سلسلے میں ترکی کی حمایت کرے۔"



متعللقہ خبریں