یورپی یونین کو ادراک کر لینا چاہیے کہ کاپلی ماراش شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کی زمین ہے

شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کے اقدامات کو یورپی یونین کی طرف سے مختلف رنگ دیا جانا یونین کے جانبدارانہ روّیے کا کھُلا اظہار ہے: شمالی قبرصی ترک جمہوریہ وزارت خارجہ

1681406
یورپی یونین کو ادراک کر لینا چاہیے کہ کاپلی ماراش شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کی زمین ہے

شمالی قبرصی ترک جمہوریہ نے کہا ہے کہ یورپی یونین  کو اب ادراک کرلینا چاہیے کہ کاپلی ماراش شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کی زمین ہے۔

شمالی قبرصی ترک جمہوریہ وزارت خارجہ کی طرف سے جاری کئے گئے تحریری بیان میں، یورپی یونین کمیشن کے نائب سربراہ اور کمیشنر برائے امورِ خارجہ و سلامتی پالیسی جوزف بوریل کی طرف سے  یورپی یونین کے نام پر اور کاپلی ماراش سے متعلق جاری کئے گئے  بیان کا جواب دیا گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ بوریل نے ماراش کے بارے میں ہمیشہ کی طرح جانبدارانہ بیان جاری کیا ہے۔ یورپی یونین ہمیشہ سے قبرصی ترک عوام اور حکومت کے وجود کی نفی کرتی چلی آئی ہے لیکن یونین کو اب اس بات کا ادراک کر لینا چاہیے کہ کاپلی ماراش شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کی زمین ہے  اور اس علاقے میں اٹھائے جانے والے اقدامات شمالی قبرصی ترک جمہوریہ  کی حکومت کی طرف سے اٹھائے جا رہے ہیں۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ صرف کسی سمجھوتے تک رسائی کا موقع فراہم کرنے کے لئے اب تک کاپلی ماراش میں کوئی کاروائی نہیں کی گئی۔ لیکن آج تک کاپلی ماراش سمیت تمام سمجھوتہ پلانوں اور بحالیِ اعتماد تجاویز کو قبرصی یونانی انتظامیہ کی طرف سے مکمل طور پر رد کیا جاتا رہا ہے۔ ماراش میں قبرصی ترکوں کی طرف سے  بین الاقوامی قوانین کے دائرہ کار میں اور نجی املاک  کے حق کے پیش نظر اٹھائے گئے اقدامات پر قبرصی یونانی عوام کی طرف سے بھی ممنونیت کا اظہار کیا گیا ہے۔ شمالی قبرصی ترک جمہوریہ کے اقدامات کو یورپی یونین کی طرف سے مختلف رنگ دیا جانا یونین  کے جانبدارانہ روّیے کا کھُلا اظہار ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ یورپی یونین ایک طرف جزیرے میں کسی سمجھوتے پر پہنچنے کی خواہش مند ہونے کی دعویدار ہے تو دوسری طرف جزیرے کے ایک فریق کی املاک کی نفی اور دوسرے فریق کی پیٹھ تھپتھپا کر حقیقی معنوں میں غیر منصنفانہ روّیہ پیش کر رہی ہے۔ یہ غیر منصفانہ روّیہ قبرصی یونانی انتظامیہ کے عدم مفاہمانہ روّیے کی واحد وجہ ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ یورپی یونین کو جلد یا بدیر یہ سمجھ آ جائے گا کہ جزیرے میں کسی سمجھوتے کے لئے شمالی قبرصی ترک جمہوریہ  کے مساوی  خود مختاری  و بین الاقوامی حیثیت کے حقوق کا احترام کیا جانا ناگزیر ہے۔

 



متعللقہ خبریں