ہم اپنی حق تلفی کی اجازت نہیں دیں گے خواہ وہ حق تلفی ایک ذرّے جتنی ہی کیوں نہ ہو: آقار

ترکی کسی کی زمین، پانی اور حق حقوق پر نگاہ نہیں رکھتا، اسی طرح ہم اپنی حق تلفی کی بھی اجازت نہیں دیں گے خواہ وہ حق تلفی ایک ذرّے جتنی ہی کیوں نہ ہو: وزیر دفاع حلوصی آقار

1634270
ہم اپنی حق تلفی کی اجازت نہیں دیں گے خواہ وہ حق تلفی ایک ذرّے جتنی ہی کیوں نہ ہو: آقار

ترکی کے وزیر دفاع حلوصی آقار نے کہا ہے کہ پنجہ۔رعد اور پنجہ۔ یلدرم آپریشنوں میں غیر فعال بنائے جانے والے PKK کےدہشت گردوں کی تعداد 68 ہو گئی ہے۔

حلوصی آقار نے مسلح افواج کے سربراہ جنرل یاشار گلیر اور بحریہ کے کمانڈر ایڈمرل عدنان اوزبال کے ہمراہ گیول جک بحری بیڑہ کمانڈ آفس  کا دورہ کیا۔

یہاں اہلکاروں سے خطاب میں انہوں نے کہا ہے کہ ہم نے عراق کے شمال میں 23 اپریل کو پنجہ۔ رعد اور پنجہ ۔یلدرم آپریشن شروع کئے۔یہ آپریشن بھاری اور کامیاب شکل میں جاری ہیں۔ حالیہ اطلاع کے مطابق ایک غار میں 6 دہشت گردوں  کو غیر فعال بنا  دیا گیا ہے۔23 اپریل سے اب تک 68 دہشت گرد جہنم واصل کئے جا چکے ہیں۔

خطاب میں مسئلہ قبرص پر بات کرتے ہوئے وزیر دفاع نے کہا ہے کہ قبرص ترکی کا ملّی دعوی ہے۔ جزیرے میں اب دو حکومتی ساخت شرط ہو گئی ہے۔

یونان کے ساتھ تعلقات کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا ہے کہ "اب انہیں سمجھ لینا چاہیے کہ ترکی کے ساتھ دھمکی آمیز زبان کا استعمال کر کے کوئی کامیابی حاصل نہیں ہو سکے گی"۔

وزیر دفاع حلوصی آقار نے کہا ہے کہ ہم نے ایجئین، بحیرہ اسود اور قبرص کے معاملے میں اپنے موقف سےسیاسی حل کی کوششوں کے لئے راہ ہموار کی ہے۔ ترکی کسی کی زمین، پانی اور حق حقوق پر نگاہ نہیں رکھتا۔ اسی طرح ہر کوئی یہ بھی اچھی طرح جان لے کہ ہم اپنی حق تلفی کی بھی اجازت نہیں دیں گے خواہ وہ حق تلفی ایک ذرّے جتنی ہی کیوں نہ ہو۔



متعللقہ خبریں