روسی اور ترک وفد کے ادلیب کے معاہدے اور دیگر امور پر مذاکرات

علاقے میں فرائض ادا کرنے والے  ترک فوجیوں کی چیک پوسٹ پر اسد قوتوں کے حملوں کی شدید مذمت

روسی اور ترک وفد کے ادلیب کے معاہدے اور دیگر امور پر مذاکرات

صدارتی ترجمان ابراہیم قالن کی زیر ِ قیادت کے وفد نے روس  کے نمائندہ خصوصی برائے شام کی قیادت  کے ایک وفد سے مذاکرات کیے۔

ایوان صدر کے دفترِ ترجمان  کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق   صدارتی محل میں ہونے والے یہ مذاکرات تقریباً 2 گھنٹوں تک جاری رہے۔

ادلیب  سے متعلق بین الاقوامی معاہدوں  کی رو  سے   علاقے میں فرائض ادا کرنے والے  ترک فوجیوں کی چیک پوسٹ پر اسد قوتوں کے حملوں کی شدید مذمت  کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ ان حملوں کا دفاعی حق  کے  مطابق  جواب دیا جائیگا۔

شامی انتظامیہ کے ضامن ممالک میں شامل روس کے اپنی ذمہ داریوں  کو پورا کرنے کی ضرورت کا پیغام دیے جانے والے ان مذاکرات میں یہ یاد دہانی کرائی گئی ہے کہ  ترکی کا قطعی مقصد  شام میں خونریزی  اور  انسانی المیہ کا سدِ باب  کرنا اور ملک میں سیاسی سلسلے  پر عمل در آمد کو ممکن بنانا ہے۔

 



متعللقہ خبریں