یورپی سلامتی و تعاون تنظیم میں ترک پروفیسر کی تعیناتی

یورپی سلامتی و تعاون تنظیم میں ترک پروفیسر کی تعیناتی

438342
یورپی سلامتی و تعاون تنظیم  میں ترک پروفیسر کی تعیناتی

یورپی سلامتی و تعاون تنظیم نے مسلمانوں کے خلاف عدم رواداری اور تفریق بازی کے خلاف جدوجہد کے معاملے میں ایک اہم قدم اٹھا یا ہے۔

تنظیم کی عبوری صدارت کے فرائض کو امسال سربیا سے حاصل کرنے والے جرمنی نے خصوصی نمائندگی کے لیے نامزد کردہ امیدواروں میں سے اولو داع شعبہ اسلامیات کے اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر بلند شنائے کو ترجیح دی ہے۔

اپنے فرائض کے دوران یورپی سلامتی و تعاون تنظیم کی سرپرستی میں انسانی حقوق کے معیار میں بہتری لائے جانے کو اولیت دینے کا اظہار کرنے والے شنائے کا کہنا ہے کہ مسلمانوں کے خلاف عدم رواداری اور تفریق بازی کے خلاف جدوجہد خصوصی نمائندگی کو انہوں نے ایک باوقار فرض ہونے کی بنا پر قبول کیا ہے۔

ترک دفتر خارجہ کی جانب سے اس تعیناتی کے حوالے سے جاری کردہ اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ علاقائی عدم استحکام، غیر متوازن طاقت کا استعمال اور بڑے والے دہشت گردی کے خطرات سے عدم رواداری کے عمل میں اضافہ ہوا ہے۔ ترکی غیر ملکی دشمنی، اسلام مخالف کاروائیوں کا سد باب کرنے کے اعتبار سے بین الاقوامی اداروں اور تنظیموں کے امور میں تعاون و خدمات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے۔



متعللقہ خبریں