برطانیہ میں اسٹریپ اے نامی انفیکشن،چھ بچے ہلاک

انویسو گروپ اے اسٹریپ انفیکشن عام نہیں ہے تاہم اس سال اس میں اضافہ ہوا ہے، خاص طور پر10سال سے کم عمر کے بچوں میں اضافہ ہوا ہے

1914353
برطانیہ میں اسٹریپ اے نامی انفیکشن،چھ بچے ہلاک

 اس سال ستمبر سے اب تک برطانیہ میں6بچے اسٹریپ اے بیکٹریل انفیکشن کے باعث حالت خراب ہونے پر ہلاک ہوگئے۔

ان میں5دس سال سے کم عمر کے تھے۔ ویلز کی ایک لڑکی بھی ہلاک ہوگئی البتہ  اسکاٹ لینڈ یا شمالی آئر لینڈ میں کسی موت کی تصدیق نہیں ہوسکی ہے۔

اسٹریپ اے انفیکشن عام طور پر ہلکا ہوتا ہے تاہم لوگ شدید بیمار ہوسکتے ہیں۔

برطانوی ایجنسی  برائے  تحفظ صحت عامہ نے مشورہ دیا ہے کہ اپنے بچے کی علامات کے بارے میں تشویش کا شکار والدین کو  طبی مشورے لینے چاہیے۔

اگرچہ انویسو گروپ اے اسٹریپ انفیکشن عام نہیں ہے تاہم اس سال اس میں اضافہ ہوا ہے، خاص طور پر10سال سے کم عمر کے بچوں میں اضافہ ہوا ہے۔

 گروپ اے اسٹریپ بیکٹریا سے پیدا ہونے والے انفیکشنز عام طور پر ہلکے ہوتے ہیں اور ان کی علامات گلے کی خرابی یا جلد کا انفیکشن ہوتی ہیں۔

بگ اسکار لیٹ فیور کا سبب بھی بن سکتا ہے اور جس کا علاج اینٹی بائیوٹکس سے ہوتا ہے اور لوگ مکمل طور پر روبصحت ہوجاتے ہیں  بہرحال بہت ہی کم  واقعات میں گروپ اے اسٹریپ انفیکشن جسم میں گہرائی میں جاسکتا ہے۔

مثال کے طور پر پھیپھڑوں اور خون کی شریانوں میں جس سے انویسو گروپ اے مسٹر پٹو کوکس نامی بیماری ہوتی ہے، جس کا علاج مشکل ہوتا ہے۔

ایجنسی کے ڈپٹی ڈائریکٹر ڈاکٹر کولن برائون کے مطابق علامات کا ایک سلسلہ ہے جو انویسو انفیکشن کی علامت ہوسکتا ہے، جس میں تیز بخار بھوک اور پانی کی کمی، رویے میں تبدیلی اور بہت زیادہ نیند کا احساس شامل ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وہ والدین کو مشورہ دیتے ہیں کہ وہ ان علامات پر نظر رکھیں اور جس قدر جلد ممکن ہو ڈاکٹر سے رجوع کریں تاکہ ان کے بچے کا علاج ہوسکے اور انفیکشن کو سنگین ہونے سے روکا جاسکے۔

 



متعللقہ خبریں