دنیا کے پہلے مصنوعی ذہانت والے وزیر نے فرائض کا آغاز کر دیا

متحدہ عرب امارات  کے پہلے AI وزیر ستائیس سالہ عمر بن سلطان العلامہ نے اپنے فرائض کا آغاز کر دیا

832188
دنیا کے پہلے مصنوعی ذہانت والے وزیر نے فرائض کا آغاز کر دیا

دنیا کے پہلے مصنوعی ذہانت والے AIوزیر نے فرائض کا آغاز کر دیا ہے۔

متحدہ عرب امارات کی کابینہ میں ایک نئی وزارت کا عہدہ قائم کر کے مصنوعی ذہانت کے امور کے ذمہ دار AIوزیر کو متعین کیا گیا ہے۔

 متحدہ عرب امارات کے نائب  صدر، وزیر اعظم اور دوبئی کے امیر شیخ محمد بن رشید المختوم نے  اپنے ٹویٹر پیج سے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ "متحدہ عرب امارات  کے پہلے AI وزیر ‘’The minister of Artificial Intelegence’’ ستائیس سالہ عمر بن سلطان العلامہ ہیں۔

عمر بن سلطان العلامہ اس سے قبل وزارت اعظمیٰ میں مستقبل کے امور کے ڈائریکٹر کے فرائض ادا  کر رہے تھے  اور موجودہ عہدے پر ان کے فرائض میں  AI ٹیکنالوجی ، اس کے استعمال کے شعبوں   اور سکیورٹی جیسے موضوعات شامل ہیں۔

متحدہ عرب امارات  نے گذشتہ دنوں اپنی سال 2031  کی AI حکمت عملی  کا بھی اعلان کیا تھا۔

نئی حکمت عملی کے مطابق AI کے ساتھ ساتھ روبوٹ ، خودکار گاڑیاں ، ڈرون طیارے  اور مریخ سیارے پر کالونی ازم جیسے موضوعات  بھی ملکی ایجنڈے پر ہیں ۔

متحدہ عرب امارات کے اہداف میں سال 2021 میں کاغذ  سے کئے جانے والے تمام  کاموں کو ڈیجیٹل کرنا، 2030 میں  پورے ملک میں رسل و رسائل کے 25 فیصد کو خود کار بنانا، 2050 میں پیدا کی جانے والی توانائی کا 75 فیصد صاف وسائل سے حاصل کرنا  اور 2117 میں مریخ پر کالونی قائم کرنا شامل ہے۔



متعللقہ خبریں