پاکستان کی معیشت میں خواتین کا اہم کردار ہے: شیری رحمان

ان خیالات کا اظہار انہوں نےاتوار کو اسلام آباد میں سی پی این ای اور فورتھ پلر کے اشتراک سے ملکی سیاست میں خواتین پرتشدد واقعات میں اضافہ کے موضع پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا

1887355
پاکستان کی معیشت میں خواتین کا اہم کردار ہے: شیری رحمان

وفاقی وزیر برائے ماحولیاتی تبدیلی سینیٹر شیری رحمان نے کہا کہ پاکستان کی 49 فیصد آبادی خواتین پر مشتمل ہے، کسی بھی بحران کا سب سے برا اثر خواتین پر پڑتا ہے، پاکستان کی معیشت میں خواتین کا اہم کردار ہے، ملکی سیاست میں بداخلاقی اور نفرت انگیزی کے واقعات، سوشل میڈیا پر طوفان بدتمیزی انتہائی افسوسناک ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نےاتوار کو اسلام آباد میں سی پی این ای اور فورتھ پلر کے اشتراک سے ملکی سیاست میں خواتین پرتشدد واقعات میں اضافہ کے موضع پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

وفاقی وزیر نے سی پی این ای اور فورتھ پلر کی جانب سے اہم مسئلہ کو اجاگر کرنے پر خراج تحسین پیش کیا اور کہاکہ خواتین کو ہراساں کرنے کے عمل کو ہمیں ہر فورم مذمت کرنی چاہیے،کوئی مہذب معاشرہ عورتوں کو ہراساں کرنے کے اجازت نہیں دیتا، ہم کسی گالی گلوچ برگیڈ کو فروغ نہیں دے سکتے ہیں۔

شیری رحمان نے کہا کہ میں شہید بینظیر بھٹو اور بلاول بھٹو کی پارٹی سے تعلق رکھتی ہوں جہاں ہراساں کرنے کا کوئی سوچ بھی نہیں سکتا، خواتین کے خلاف استحصال پر آصف علی زرداری سخت ایکشن لیتے ہیں، میں نے عورتوں کی جدوجہد پر کتاب لکھی ہے، پاکستان کی 49 فیصد آبادی خواتین پر مشتمل ہے، کسی بھی بحران کا سب سے برا اثر خواتین پر پڑتا ہے، پاکستان کی معیشت میں خواتین کا اہم کردار ہے۔انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے فورم سے اخلاقیات کا جنازہ نکالا جا رہا ہے، جو مریم اورنگزیب کے ساتھ ہوا وہ کسی کے ساتھ بھی ہو سکتا ہے، تحریک انصاف کو اس طرح کے واقعات کو فروغ دینے کے بجائے ان کی مذمت اور روک تھام کرنی چاہئے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ خواتین کا استحصال ہو رہا ہے اور تحریک انصاف کے رہنما چپ کر کے کھڑے ہیں،آپ قائد اعظم کے پاکستان میں فسطاعیت کو ہوا دے رہے ہیں، آپ اپنی مخالف جماعت کے خواتین کے ساتھ اس طرح کا رویہ اپنائے گے؟ یہ عمران خان کی تقریروں اور بیانیہ کے ثمرات ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمارا مذہب معاشرہ عورتوں کے ساتھ اس طرح رویہ کی اجازت نہیں دیتا، عورتوں کو ہراساں کرنے والوں کو معافی مانگنی چاہیے،تحریک انصاف کو چاہیے کہ اس طرح کی آلودگی کو فلٹر لگائے ورنہ معاشرہ نے خود ان کا احتساب کرے گا۔

شیری رحمان نے کہا ہے کہ لوگوں سے اپیل ہے پاکستان تحریک انتشار کی سیاست کا حصہ نا بنے، اقتدار میں آنے کے لیے تحریک انصاف کے رہنما ایک بار پھر انتشار پھیلانا چاہتے ہیں، ان کا مزید کہنا تھا کہ سیاست میں ناکامی کہ بعد عمران خان بوکھلاہٹ کا شکار ہیں،

انہوں نے خود تسلیم کیا کہ لوگ ان کی لانگ مارچ کی کال پر نہیں نکلے،عوام جانتی ہے یہ حقیقی آزادی نہیں ’’عمران بچائو‘‘تحریک ہے، اس کا واحد مقصد کیسز اور نااہلی سے بچنا ہے،پی ٹی آئی ایک بار پھر جلائو گھیرائو اور اسلام آباد کے محاصرے کے طبل بجا رہی ہے، عمران خان انتخابات کی نہیں بلکہ اقتدار میں آنے کی یقین دہانی مانگ رہے۔



متعللقہ خبریں