حزب اختلاف انھیں این آر او کے حصول کیلئے بلیک میل نہیں کرسکتی: وزیراعظم عمران خان

انہوں نے کہاکہ وہ جرائم پیشہ افراد اور ڈاکوؤں کو این آر او نہیں دیں گے ۔ وزیراعظم نے کہاکہ ذرائع ابلاغ کے کچھ ادارے جعلی خبروں اور منفی پروپیگنڈے کے ذریعے مایوسی اور ناامیدی پھیلارہے ہیں

1767061
حزب اختلاف انھیں این آر او کے حصول کیلئے بلیک میل نہیں کرسکتی: وزیراعظم عمران  خان

وزیراعظم عمران خان نے ان لوگوں کو این آر او نہ دینے کے عزم کا اعادہ کیا ہے جنہوں نے ملک کی دولت لوٹی ہے ۔

وہ پاکستان ٹیلی ویژن پرلوگوں کی براہ راست فون کالز کاجواب دے رہے تھے۔ وزیراعظم نے کہاکہ حزب اختلاف انھیں این آر او کے حصول کیلئے بلیک میل نہیں کرسکتی انہوں نے کہاکہ انھیں این آر او دینا ، پاکستان سے غداری ہوگی اوروہ اس کی اجازت نہیں دیں گے۔

 انہوں نے کہاکہ وہ جرائم پیشہ افراد اور ڈاکوؤں کو این آر او نہیں دیں گے ۔ وزیراعظم نے کہاکہ ذرائع ابلاغ کے کچھ ادارے جعلی خبروں اور منفی پروپیگنڈے کے ذریعے مایوسی اور ناامیدی پھیلارہے ہیں۔عالمی بنک کی رپورٹ کے مطابق عمران خان نے کہا کہ ملک میں مہنگائی کم ہورہی ہے جبکہ معیشت کرونا وائرس وباء کے باوجود 5.37فیصد کی شرح سے ترقی کررہی ہے انہوں نے کہاکہ ملک میں تعمیراتی شعبہ فروغ پارہا ہے ۔

انہوں نے کہاکہ 30 صنعتیں تعمیراتی شعبے سے براہ راست منسلک ہیں اوراس شعبے سے استفادہ کررہی ہیں۔زرعی شعبے کے بارے میں بات کرتے ہوئے عمران خان نے کہاکہ ملک میں گندم ، گنے ، مکئی اورچاول کی ریکارڈ فصل ہوئی جس سے کسان برادری کی آمدن میں 73فیصد اضافہ ہوا ۔

انہوں نے کہاتمام اقتصادی اشاریے ظاہر کرتے ہیں کہ معیشت ترقی کررہی ہے اور ذرائع ابلاغ کو معاشرے میں بے یقینی کی فضا پیدا کرنے سے گریز کرناچاہیے ۔ایک کالر کے سوال کے جواب میں عمران خان نے عوام پرزوردیا کہ وہ کورونا وائرس کی قسم اومی کرون کے پھیلائو کی روک تھام کیلئے پبلک مقامات پر ماسک پہنیں تاہم انہوں نے واضح کیاکہ حکومت کاروبار بند کرنے کا نہیں سوچ رہی کیونکہ اس سے غریب عوام پرمنفی اثرات مرتب ہوں گے۔  وزیراعظم نے کہا کہ حکومت قانون کی حکمرانی اور معاشرے میں طاقتور اور کمزور کے درمیان فرق ختم کرنے کے لئے کام کررہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اب حزب اختلاف لوگوں کو حکومت کے خلاف سڑکوں پر لانے کی کوشش کررہی ہے لیکن اسے ایک چیز ذہن میں رکھنی چاہیے کہ عوام سیاسی رہنماؤںکی بدعنوانی کے تحفظ کے لئے باہر نہیں آئیں گے۔



متعللقہ خبریں