کابینہ نے سردیوں کیلئے گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کی منظوری دے دی

کابینہ کے فیصلوں کے بارے میں صحافیوں کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیر اطلاعات چودھری فواد حسین نے کہا کہ گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کے تحت کل سے آئندہ سال پندر ہ فروری تک سی این جی سیکٹر کو گیس کی فراہمی معطل رہے گی

1741064
کابینہ نے سردیوں کیلئے گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کی منظوری دے دی

وفاقی کابینہ کا اجلاس منگل کے روز اسلام آباد میں وزیر اعظم کی زیر صدارت منعقد ہواجس میں موسم سرما کے دوران گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کی منظوری دی گئی تاکہ گیس کی قلت سے نمٹا جا سکے۔

کابینہ کے فیصلوں کے بارے میں صحافیوں کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیر اطلاعات چودھری فواد حسین نے کہا کہ گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کے تحت کل سے آئندہ سال پندر ہ فروری تک سی این جی سیکٹر کو گیس کی فراہمی معطل رہے گی۔

تاہم انہوں نے کہا کہ آئی پی پیز، کھاد کمپنیوں اور برآمدی صنعتوں کو گیس کی فراہمی مکمل طور پر جاری رہے گی۔

انہوں نے کہا کہ ایل این جی پر چلنے والے بجلی گھروں کو پانچ فیصد اضافی گیس فراہم کی جائے گی۔وزیر اطلاعات نے کہا کہ سی این جی، سیمنٹ اور کیپٹیو پاور پلانٹس سے بچنے والی گیس گھریلو صارفین کو فراہم کی جائے گی۔فواد چودھری نے کہا کہ موسم سرما میں بجلی کے استعمال کی حوصلہ افزائی بھی کی جا رہی ہے اور گھریلو صارفین کے لئے بجلی کی قیمتوں میں کمی کی گئی ہے تاکہ انہیں گیزر اور ہیٹر بجلی پر منتقل کرنے پر آمادہ کیا جا سکے۔وزیر اطلاعات نے خبردار کیا کہ ہمارے گیس ذخائر تیزی سے کم ہو رہے ہیں اورہمیں اس صورتحال سے نمٹنے کے لئے متبادل حکمت عملی وضع کرنا ہو گی۔منصوبہ بندی کے وزیر اسد عمر اور صحت کے معاونِ خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان نے کابینہ کو کورونا کی نئی قسم OMICRON کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔کابینہ نے صوبائی حکومتوں اور عوام سے کہا کہ کورونا کی نئی قسم سے بہتر انداز میں نمٹنے کے لئے ویکسین لگانے کا عمل مکمل کیا جائے۔چودھری فواد نے کہا کہ کابینہ نے الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کے استعمال سے متعلق امور پر بھی تبادلہ خیال کیا۔انہوں نے کہا کہ قانون میں ترمیم کے مطابق آئندہ انتخابات میں الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں کا استعمال لازم ہے۔کابینہ کے اجلاس میں لاہور میں ووٹوں کی خریداری کی حالیہ ویڈیو پر تشویش ظاہر کی گئی، وزیر اطلاعات نے کہا کہ الیکشن کمیشن کو چاہیے کہ وہ اس معاملے سمیت سینیٹ انتخابات میں دھاندلی کے معاملے کو منطقی انجام تک پہنچائے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ سعودی عرب کے تین ارب ڈالر کی سٹیٹ بنک میں محفوظ منتقلی اور ایک ارب بیس کروڑ ڈالر مالیت کے خام تیل سے متعلق تمام معاملات طے پا گئے ہیں، انہوں نے کہا کہ انٹرنیشنل اسلامک ٹریڈ فنانس کارپوریشن بھی پاکستان کو 76 کروڑ بیس لاکھ ڈالر فراہم کرے گی جس سے مارکیٹ میں روپے کے استحکام میں مدد ملے گی۔

وفاقی کابینہ نے ضروری اشیاء کی قیمتوں کا بھی جائزہ لیا اور اجلاس کو بتایا گیا کہ ہفتہ وار قیمتوں کے اشاریے میں اعشاریہ چھ سات فیصد کمی آئی ہے۔وزیر اطلاعات نے ہا کہ پاکستان انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر افغانستان کو پچاس ہزار میٹرک ٹن گندم فراہم کرے گا۔کابینہ کے اجلاس میں وزیراعظم نے ایف آئی اے کو ہدایت کی کہ انسانی سمگلنگ میں ملوث عناصر کا سدباب کیا جائے۔کابینہ نے پاکستان میں اسلامی تعاون تنظیم کے وزرائے خارجہ کا خصوصی اجلاس منعقد کرانے کی منظوری بھی دی۔کابینہ نے ماحولیاتی تبدیلی کے بارے میں وزیراعظم کے مشیر ملک امین اسلم کو سموگ کے مسئلے سے نمٹنے کیلئے طویل مدت منصوبہ تیار کرنے کی ذمہ داری سونپی۔



متعللقہ خبریں