ہسپتالوں میں ادویات،آکسیجن اور بیڈز فراہمی کو یقینی بنایا جائے: وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان نے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر ( این سی او سی) برائے کوویڈ 19 کا دورہ کیا۔ چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ بھی اس موقع پر موجود تھے

1439079
ہسپتالوں میں ادویات،آکسیجن اور بیڈز فراہمی کو یقینی بنایا جائے: وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان نے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر ( این سی او سی) برائے کوویڈ 19 کا دورہ کیا۔ چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ بھی اس موقع پر موجود تھے۔

 وفاقی وزراء کے علاوہ وزیراعظم آزاد جموں و کشمیر، پنجاب، سندھ، خیبرپختونخوا، بلوچستان اور گلگت بلتستان کے وزرائے اعلیٰ نے بھی ویڈیو لنک کے ذریعے اجلاس میں شرکت کی۔ وفاقی وزیر اسد عمر اور ڈی جی آپریشنز اینڈ پلاننگ این سی او سی میجر جنرل آصف محمود گورائیہ نے وزیراعظم کو کوویڈ 19 کی صورتحال، ہسپتالوں پر دباؤ و سہولیات اور مستقبل کے اندازوں کے بارے میں بریفنگ دی۔ وزیراعظم کو ملک بھر میں کوویڈ 19 کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے کیے جانے والے اقدامات، ایس او پیز کے نفاذ، وباء کے انتظام کی حکمت عملی اور تمام شراکت داروں کی مشاورت سے کیے گئے فیصلوں پر عملدرآمد کے بارے میں آگاہ کیا گیا۔

 اس موقع پر کورونا کے چیلنج سے نمٹنے کے لیے ہیلتھ کیئر کے نظام میں بہتری لانے، ہیلتھ پروفیشنلز کی استعداد کار بڑھانے، مریضوں کے لیے بیڈز کی دستیابی میں اضافے، اہم ادویات اور آکسیجن کی وافر فراہمی کو یقینی بنانے کے حوالے سے اقدامات کو بھی اجاگر کیا گیا۔ اجلاس کے شرکاء نے اتفاق رائے سے صحت اور معیشت کے درمیان توازن برقرار رکھنے کی حکمت عملی جاری رکھنے کا عزم کیا اور اس بات کا اعادہ کیا کہ کاروبار ضرور کھلا رہنا چاہیے تاہم ایس او پیز پر آگاہی اور انتظامی اقدامات کے ذریعے سختی سے عمل درآمد یقینی بنایا جائے گا۔ اسی طرح این سی او سی کی جانب سے حال ہی میں پیش کردہ ٹیکنالوجی ٹولز کے ذریعے ہاٹ اسپاٹس کی نشاندھی کر کے سمارٹ لاک ڈائون یقینی بنایا جائے گا۔

 فورم کو اس حوالے سے ٹیکنالوجی کے استعمال کے بارے میں بھی بریفنگ دی گئی اور بتایا گیا کہ گزشتہ چار دنوں میں کی گئی ٹیسٹنگ میں کورونا پازیٹیو کیسز کی تعداد میں کمی آئی ہے۔ تمام صوبوں کے وزرائے اعلیٰ اور وزیراعظم آزاد جموں و کشمیر اپنے اپنے متعلقہ علاقوں میں کیے جانے والے اقدامات کے بارے میں آگاہ کیا اور وفاقی حکومت کی جانب سے فراہم کردہ سپورٹ کا متفقہ طور پر اعتراف کیا۔ اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے ہدایت کی کہ تمام تر کوششیں کورونا وباء کے پھیلاؤ کو روکنے پر مرکوز ہونی چاہئیں۔ تمام ہسپتالوں میں ادویات، آکسیجن اور بیڈز کی دستیابی یقینی بنائی جائے۔ انہوں نے اس غیر معمولی چیلنج کے خلاف پوری قوم میں مکمل اتحاد کی ضرورت پر زور دیا اور اس بات کی تاکید کی کہ عوام اس صورتحال میں بزرگوں اور بیماروں کا خصوصی خیال رکھیں۔ وزیراعظم نے این سی او سی کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے کوویڈ 19 کے خلاف متوازن حکمت عملی اپنائی ہے تاہم ہر شہری کو بہت زیادہ احتیاط کرنی ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں آئندہ دو ماہ کے دوران کورونا کے خلاف ایک مربوط اور مشترکہ قومی ردعمل اختیار کرنا ہو گا، ہمارے عمل سے اس بحران کی شدت اور اس کے خلاف ہماری کامیابی کا تعین ہو گا۔ وزیراعظم نے ہیلتھ ورکرز کی قربانیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ پوری قوم ان کی خدمات کی معترف ہے۔ انہوں نے کہا کہ میڈیا نے اس حوالے سے ذمہ داری کا مظاہرہ کیا ہے اور کسی بھی ہیجان انگیزی کی میڈیا کو خود روک تھام کرنی چاہیے



متعللقہ خبریں