پاکستان میں شدید برف باری،ہلاکتوں کی تعداد 98 ہوگئی

آزاد کشمیر کی وادی نیلم میں برفانی تودے کی تباہ کاریاں جاری ہیں جس سے سینکڑوں عمارتیں  متاثر اور درجنوں افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ ملک میں موسمیاتی شدت کے سبب حادثات میں اموات کی کل تعداد 98 تک جاپہنچی ہے

پاکستان میں شدید برف باری،ہلاکتوں کی تعداد 98 ہوگئی

آزاد کشمیر کی وادی نیلم میں برفانی تودے کی تباہ کاریاں جاری ہیں جس سے سینکڑوں عمارتیں  متاثر اور درجنوں افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ ملک میں موسمیاتی شدت کے سبب حادثات میں اموات کی کل تعداد 98 تک جاپہنچی ہے۔

خبر کے مطابق، ملک بھر میں مغربی ہواؤں کے باعث موسمی صورتحال شدت اختیار کر گئی ہے جس کے نتیجے میں برفانی تودے، لرزش اراضی  اور مختلف حادثات رونما ہوئے۔

برفانی تودے گرنے کے باعث سب سے زیادہ اموات آزاد کشمیر میں ہوئیں جہاں جاں بحق افراد کی تعداد 69 ہوگئی ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ شدید برف باری کے باعث وادی کے کچھ علاقوں تک رسائی ابھی تک ممکن نہیں لہٰذا اموات کی تعداد میں اضافہ ہونے کا اندیشہ ہے جبکہ موسم کا حال بتانے والوں نے جمعے سے برفباری کے نئے سلسلے کی پیشنگوئی کی ہے۔

دوسری جانب گلگت بلتستان میں بھی برفانی تودے گرنے کی وجہ سے ایک لڑکی اور ایک ڈھائی سالہ بچہ زندگی کی بازی ہار گیا۔

حکام کا کہنا ہے کہ  گزشتہ 2 سے 3 روز کے دوران موسمی شدت کے باعث ہونے والے حادثات میں آزاد کشمیر میں 69 افراد، بلوچستان میں 20، پنجاب کے ضلع سیالکوٹ میں 7 اور گلگت بلتستان میں 2 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔

 



متعللقہ خبریں