پاکستان میں سیاحت کو فروغ کے لیے تمام ضروری اقدامات اٹھائے جائیں گے: عمران خان

ان خیالات کا اظہار جمعرات کو انہوں نے ملک میں سیاحت کے فروغ کے حوالہ سے منعقدہ ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا

پاکستان میں سیاحت کو فروغ کے لیے تمام ضروری اقدامات اٹھائے جائیں گے: عمران خان

وزیرِاعظم عمران خان نے کہا ہے کہ سیاحت کے شعبہ کے فروغ سے نہ صرف پاکستان میں رہنے والے افراد کو تفریح کی معیاری سہولیات میسر آئیں گی بلکہ دنیا بھر سے لوگ پاکستان کا رخ کریں گے جس سے سیاحت سے منسلک سیکٹرز کو فروغ ملے گا اور نوجوانوں کیلئے نوکریوں کے بے شمار مواقع پیدا ہوں گے۔

ان خیالات کا اظہار جمعرات کو انہوں نے ملک میں سیاحت کے فروغ کے حوالہ سے منعقدہ ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں وزیراعظم کے معاون خصوصی سیّد ذوالفقار عباس بخاری، معاون خصوصی برائے اطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان اور دیگر سینئر افسران نے بھی شرکت کی۔ اجلاس میں ملک میں سیاحت کے فروغ کیلئے جانے والے اقدامات کے حوالہ سے بریفنگ دی گئی۔

وزیراعظم کو بتایا گیا کہ ملکی تاریخ میں پہلی دفعہ نیشنل ٹورازم سٹرٹیجی 2020-30ء تشکیل دی گئی ہے۔ اس کے علاوہ نیشنل ٹورازم ایکشن پلان 2020-25ء مرتب کیا گیا ہے، سیاحت کے فروغ کیلئے مختلف ایونٹس کیلئے نیشنل کیلنڈر بھی ترتیب دیا گیا ہے۔ وزیرِاعظم کو بتایا گیا کہ پی ٹی ڈی سی میں اصلاحات کا عمل شروع کیا گیا ہے، پی ٹی ڈی سی کی نئی ویب سائٹ قائم کی گئی ہے اور آن لائن بکنگ کا نظام رائج کیا گیا ہے، اس کے ساتھ ساتھ سیاحت سے متعلق مختلف ترقیاتی منصوبوں کی منظوری کا عمل بھی جاری ہے۔

 اجلاس میں صوبہ پنجاب اور صوبہ خیبرپختونخوا میں سیاحت کے فروغ کیلئے مختلف اقدامات پر بھی تفصیلی طور پر غور کیا گیا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیرِاعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں سیاحت کا بے شمار پوٹینشل موجود ہے جس کو بروئے کار لانے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ سیاحت کے شعبہ کے فروغ سے نہ صرف پاکستان میں رہنے والے افراد کو تفریح کی معیاری سہولیات میسر آئیں گی بلکہ دنیا بھر سے لوگ پاکستان کا رخ کریں گے جس سے سیاحت سے منسلک سیکٹرز کو فروغ ملے گا اور نوجوانوں کیلئے نوکریوں کے بے شمار مواقع پیدا ہوں گے۔



متعللقہ خبریں