وزیراعظم عمران خان کی بجنگ پہنچنے پر مصروفیات جاری، مختلف کمنیپوں کے سی ای اوز سے ملاقاتیں

عمران خان چین کے صدر اور وزیراعظم کی طرف سے اپنے اعزاز میں دی گئی الگ الگ ضیافتوں میں بھی شرکت کریں گے۔ دونوں ممالک کے وزرائے اعظم کے مابین اس موقع پر بہت سے معاہدوں اور مفاہمت کی یادداشتوں پر بھی دستخط کئے جائیں گے

وزیراعظم  عمران خان  کی بجنگ پہنچنے  پر مصروفیات  جاری، مختلف کمنیپوں کے سی ای اوز سے ملاقاتیں

وزیر اعظم عمران خان چین کےسرکاری دورے پر بیجنگ پہنچ گئے،بیجنگ میں چینی وزیر ثقافت لوشوگنگ نے وزیر اعظم عمران خان کا استقبال کیا۔

اس موقع پر پاکستان میں چینی سفیر یاؤ جنگ اور چین میں پاکستانی سفیر نغمانہ ہاشمی بھی موجود تھیں۔

عمران خان کے ہمراہ وفاقی وزراء شاہ محمود قریشی اور خسرو بختیار کے علاوہ چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ زبیر گیلانی بھی ہیں۔ دورے کے دوران چینی قیادت سے علاقائی اور دو طرفہ اہمیت کے امور پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

وہ چین کے صدر اور وزیراعظم کی طرف سے اپنے اعزاز میں دی گئی الگ الگ ضیافتوں میں بھی شرکت کریں گے۔ دونوں ممالک کے وزرائے اعظم کے مابین اس موقع پر بہت سے معاہدوں اور مفاہمت کی یادداشتوں پر بھی دستخط کئے جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان کا دورہ چین دونوں ممالک کی قیادت کے مابین طویل عرصہ سے قائم اس روایت کا تسلسل ہے جس کے تحت دونوں ممالک کی قیادت باہمی دلچسپی، کے دوطرفہ علاقائی و بین الاقوامی امور پر باقاعدگی کے ساتھ مشاورت کرتی ہے۔ وزیراعظم عمران خان 5 اگست 2019ءسے مقبوضہ جموں و کشمیر میں پائی جانے والی صورتحال سے جنوبی ایشیاءکے امن اور سلامتی کو درپیش خطرات سمیت علاقے میں ہونے والی تبدیلیوں اور پیش رفت کے بارے میں تبادلہ خیال کریں گے۔

 وزیراعظم عمران خان کا دورہ ، چین کے ساتھ پاکستان کے اقتصادی سرمایہ کاری اور تذویراتی تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کے سلسلے میں انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ دیگر امور کے علاوہ وزیراعظم عمران خان چینی قیادت کو پاکستان میں سی پیک کے جاری منصوبوں پر عملدرآمد کی رفتار تیز کرنے کے حوالے سے موجودہ حکومت کے حالیہ اہم تاریخی فیصلوں اور بی آر آئی کے ہائی کوالٹی ڈیمانسٹریشن پراجیکٹ کے طور پر سی پیک کو آگے بڑھانے کے حوالے سے آگاہ کریں گے۔ اس موقع پر دونوں ممالک کے دوطرفہ تجارتی و سرمایہ کاری اشتراک کار کو مضبوط بنانے کے لئے کارپوریٹ اور چین کے کاروباری شعبے کے اعلیٰ نمائندوں کے درمیان ملاقاتیں بھی ہوں گی۔

وزیراعظم عمران خان بیجنگ انٹرنیشنل ایئرپورٹ ہارٹیکلچر ایکسپو کی اختتامی تقریب میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شریک ہوں گے جبکہ چین کے وزیراعظم لی کی کیانگ میزبانی کریں گے۔ پاکستان اور چین نہ صرف گہرے دوست بلکہ ایک دوسرے کے شراکت دار ہیں اور دونوں ممالک کے مابین تاریخی تعلقات استوار ہیں۔ دونوں ممالک نے ہر طرح کے حالات میں ایک دوسرے کا ساتھ دیا ہے اور یہ آزمودہ دوستانہ تعلقات وقت کی ہر آزمائش پر پورے اترے ہیں۔ دونوں ممالک کی قیادت مستقبل میں بھی دونوں ممالک کے مابین تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کے لئے پرعزم اور کوشاں ہے

وزیراعظم عمران خان چین کے صدر شی جن پنگ اور وزیراعظم لی کی کیانگ سے الگ الگ ملاقاتیں بھی کریں گے۔

 دونوں ممالک کے وزرائے اعظم کے مابین اس موقع پر بہت سے معاہدوں اور مفاہمت کی یادداشتوں پر بھی دستخط کئے جائیں گے۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجو ہ وزیر اعظم عمران خان کے ہمراہ چینی صدر اور وزیر اعظم سے بھی ملاقاتیں کریں گے۔

وزیراعظم عمران خان  نے  منگل  کے روز  چین  کی مختلف کمپنیوں کے سربراہان اور سی ای اوز کے ساتھ ملاقات کا سلسلہ بھی شروع  کررکھا ہے۔  انہوں نے سب سے پہلے چین کے اورینٹ ہولڈنگز گروپ لمیٹڈ کے بورڈ کے چیئرمین جیانگ ژومنگ نے ملاقات کی ۔ اورینٹ ایور ٹرسٹ کیپیٹل گروپ لمیٹڈ ”اورینٹ” کا شمار اورینٹ ہولڈنگز گروپ بڑے اداروں میں ہوتا ہے۔ 1990ء میں اپنے قیام کے20 سال کے دوران اورینٹ ہولڈنگز گروپ نے دنیا کے مختلف خطوں اور مختلف صنعتوں میں بطور سٹاک ہولڈنگز سرمایہ کار گروپ نمایاں مقام حاصل کیا ہے۔اورینٹ انفراسٹرکچر کنسٹریکشن’ ریئل سٹیٹ ڈویلپمنٹ’ کنسٹریکشن میٹریلز’ کیمیکلز فائبر’ مائننگ’ ای کامرس سمیت تعمیرات کی صنعت کے لئے مختلف مصنوعات تیار کرنے کے علاوہ انٹیلی جنٹ مینوفیکچرنگ وغیرہ کے شعبہ میں بھی نمایاں مقام کا حامل ادارہ ہے۔

 بعد میں وزیراعظم عمران خان سے لانگ مارچ ٹائر کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر لی کنگ وین نے ملاقات کی ہے۔ چائو یانگ نیو لانگ مارچ ٹائر کمپنی لمیٹڈ لیانوننگ ٹائر گروپ کی ممبر کمپنی ہے جو بین الاقوامی سطح پر بہترین ٹائر تیار کرتی ہے۔

علاوہ ازیں وزیراعظم عمران خان سے چین کے گژوبا گروپ کے چیئرمین لیوزی ژیانگ نے ملاقات کی ہے۔ چائنا گژوبا گروپ کارپوریشن (سی جی جی سی) کا قیام 1970ء میں عمل میں آیا تھا جو چینی حکومت کی ملکیت چائنا انرجی انجینئرنگ گروپ کمپنی لمیٹڈ کا ایک اہم ادارہ ہے۔چین میں سی جی جی سی کا شمار تیزی سے ترقی کرنے والی معروف لسٹڈ کمپنیوں میں ہوتا ہے جس کی مالی حیثیت انتہائی مستحکم ہے۔سی جی جی سی نے اپنے کاروبار کو100 سے زیادہ ممالک اور ریجنزتک وسعت دی ہے۔ ملاقات کے دوران سی جی جی سی کے چیئرمین نے پاکستان میں مختلف شعبوںبالخصوص توانائی کے شعبہ میں سرمایہ کاری کے نئے مواقع تلاش کرنے اور سرمایہ کاری میں گہری دلچسپی کا اظہار کیا ہے۔



متعللقہ خبریں