چشمہ امن آپریشن

مقصد امن
ہدف دہشت گردی

سعودی صحافی کے انجام کے حوالے سے ترکی اور سعودی عرب کی مشترکہ تحقیقات خوش آئند ہیں، پاکستان

ہم امید کرتے ہیں کہ یہ دونوں ممالک  اس  معاملے کو مشترکہ طور پر حل کرلیں گے

سعودی صحافی کے انجام کے حوالے سے ترکی اور سعودی عرب کی مشترکہ تحقیقات خوش آئند ہیں، پاکستان

پاکستان نے اطلاع دی ہے کہ لا پتہ صحافی جمال قاشقجی کے واقع کے راز کو آشکار کرنے کے لیے ترکی اور سعودی عرب کی مشترکہ تحقیقاتی کاروائیوں کا فیصلہ باعثِ مسرت ہے۔

دفتر خارجہ کے ترجمان  محمد فیصل نے 2 اکتوبر کو سعودی عرب کے استنبول میں قونصل خانے میں داخلے کے بعد کوئی اطلاع نہ ملنے والے سعودی صحافی جمال قاشقجی  کے حوالے سے ایک سوال کا تحریری جواب دیا ہے۔

محمد فیصل  کا کہنا ہے کہ" تحقیقات جاری ہونے کی بنا پر اس حوالے سے کوئی اعلان جاری کرنے کے لیے اس کے نتیجے کا انتظار کرنا  زیادہ بہتر ہو گا، البتہ اس معاملے میں ترکی اور سعودی عرب کا مشترکہ طور پر تفتیش کرنا ایک خوش آئند پیش رفت ہے، پاکستان کے ترکی اور سعودی عرب کے ساتھ قریبی اور برادرانہ تعلقات استوار ہیں۔  ہم امید کرتے ہیں کہ یہ دونوں ممالک  اس  معاملے کو مشترکہ طور پر حل کرلیں گے۔"

قاشقجی واقع کے حوالے سے ایران نے بھی ایک اعلان جاری کیا ہے ۔

اس ملک کی وزارت خارجہ کے ترجمان بہرام قاسمی  نے جمال قاشقجی کے حوالے سے ایران   کے مؤقف   پر سوالات کے جواب میں کہا کہ"حقائق  کا پردہ فاش ہونے تک تہران انتظامیہ اس موضوع پر کوئی تبصرہ نہیں کرے گی۔ "

یورپی یونین کے خارجہ تعلقات و سلامتی پالیسی کی نمائندہ اعلی فریڈریکا موغارینی   نے بھی کہا ہے کہ آح لگزمبرگ  میں  یکجا ہونے والی خارجہ  امور کونسل میں قاشقجی معاملے کو ایجنڈے میں لایا جائیگا۔

 



متعللقہ خبریں