فلسطین: پاکستان کے سفیر کو وزارت خارجہ میں طلب کر لیا گیا

فلسطین میں پاکستان کے سفیر ولید ابو علی کو، لشکر طیبہ کے بانی حافظ محمد سعید کی شرکت سے منعقدہ "القدس کے ساتھ اتحاد "نامی  تقریب میں شرکت کرنے پر ،فلسطین کی وزارت خارجہ میں طلب کر لیا گیا

فلسطین: پاکستان کے سفیر کو وزارت خارجہ میں طلب کر لیا گیا

فلسطین میں پاکستان کے سفیر ولید ابو علی کو، لشکر طیبہ کے بانی حافظ محمد سعید کی شرکت سے منعقدہ "القدس کے ساتھ اتحاد "نامی  تقریب میں شرکت کرنے پر ،فلسطین کی وزارت خارجہ میں طلب کر لیا گیا۔

وزارت خارجہ کی طرف سے جاری کردہ بیان کے مطابق سفیر ولید ابو علی نے پاکستان کے شمال مشرقی شہر راولپنڈی میں ، سال 2008 میں بھارت کے شہر بمبئی میں حملے کی ذمہ دار قرار دی جانے والی لشکر طیبہ تنظیم کے بانی حافظ سعید کی شرکت سے منعقدہ  "القدس کے ساتھ اتحاد " نامی تقریب میں شریک ہونے کی وجہ سے وزارت خارجہ میں طلب کر لیا گیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ سفیر کی مذکورہ تقریب میں شرکت ایک غلطی کا نتیجہ ہے تاہم اس غلطی کی کوئی معذرت نہیں ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ  فلسطین بھارت کے ساتھ اچھے تعلقات قائم کرنے کا خواہش مند ہے  ۔ اسرائیلی قبضے کے خاتمے اور 1967 کی سرحدوں میں اور مشرقی القدس کے دارالحکومت والی فلسطینی حکومت کے قیام  کے لئے بھارت کی کوششیں قابل ستائش ہیں۔

واضح رہے کہ امریکہ کی طرف سے لشکر طیبہ کے بانی حافظ سعید کے سر کی قیمت 10 ملین ڈالر رکھی گئی تھی لیکن پاکستان کی طرف سے حافظ سعید کو رہا کر دیا گیا تھا جس کی وائٹ ہاوس کی طرف سے مذمت کی گئی تھی۔



متعللقہ خبریں