"دنیا جو چاہے کرلے" القدس اسرائیل کا ناقابل منقسم صدر مقام رہے گا: نیتین یاہو

اسرائیلی وزیراعظًم نیتین یاہو نے القدس پر اسرائلی قبضے کے 53 سال مکمل ہونے پر مبنی منعقدہ تقریابت  کے سلسلے میں  اپنے خطاب میں کہا کہ  القدس اسرائیل کا ناقبل منقسم صدر مقام رہے گا

1421817
"دنیا جو چاہے کرلے" القدس اسرائیل کا ناقابل منقسم صدر مقام رہے گا: نیتین یاہو

 اسرائیلی وزیراعظم  بن یامین نیتین یاہو نے کہا ہے کہ  نئی حکومت ان مذاکرات کا خیر مقدم کرے گی جس میں القدس کواسرائیلی صدر مقام  قبول کیا جائے گا۔

 نیتین یاہو نے  القدس پر اسرائلی قبضے کے 53 سال مکمل ہونے پر مبنی منعقدہ تقریابت  کے سلسلے میں  اپنے خطاب میں کہا کہ  القدس اسرائیل کا ناقبل منقسم صدر مقام رہے گا۔

 وزیراعظم نے کہا کہ  حکومت کے نئے اتحادیوں کا اس سلسلے میں موقف قابل تحسین ہے اور نئی حکومت  صدر ٹرمپ کے نام نہاد مشرق وسطی امن پلان کا حصہ بننے اور اس سے وابستہ فلسطینیوں سے مذاکرات کا آغاز اسی وقت کرے گی جب وہ القدس کو اسرائیل کا صدر مقام قبول کرلیں گے۔

 دریں اثنا۔ مقبوضۃ علاقے میں یہودیوں نے  القدس پر قبضے کی 53 ویں سالگرہ   کے موقع پر مظاہرے کیے اور ریلیاں نکالیں۔

 سینکڑوں یہودیوں نے گاڑیوں کے جلوس کی شکل میں شہر بھر کا دورہ کیا  اور نعرے لگائے۔

 

 



متعللقہ خبریں