یمن پارلیمنٹ: مجلس الانتقالی الجنوبی اپنی حدوں کو پار کر گئی ہے، صدر ہادی ضروری اقدامات کریں

مجلس الانتقالی الجنوبی کے اٹھائے گئے اقدامات اپنی حدوں کو پار کر گئی ہے، صدر ہادی اس معاملے میں فوری اور حتمی تدابیر اختیار کریں: یمن پارلیمنٹ

1405993
یمن پارلیمنٹ: مجلس الانتقالی الجنوبی اپنی حدوں کو پار کر گئی ہے، صدر ہادی ضروری اقدامات کریں

یمن پارلیمنٹ نے صدر عبدالربو منصور ہادی سے اپیل کی ہے کہ متحدہ عرب امارات کی حمایت کی حامل علیحدگی پسند مجلس الانتقالی الجنوبی کے اٹھائے گئے اقدامات کے سدباب کے لئے فوری حفاظتی تدابیر اختیار کی جائیں۔

پارلیمنٹ نے جاری کردہ تحریری بیان میں کہا ہے کہ پارلیمنٹ خلیجی تعاون کونسل کی کاروائی، قومی ڈائیلاگ کانفرنس کے فیصلوں ، اقوام متحدہ کی سلامت کونسل کے 2216 نمبر فیصلے اور ریاض سمجھوتے کے برعکس اقدامات کی مخالفت کرتی ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ مجلس الانتقالی الجنوبی کے اٹھائے گئے اقدامات اپنی حدوں کو پار کر کے لا پرواہی کے نقطے تک آ پہنچے ہیں۔ اس حوالے سے تمام امن اقدامات کی مخالفت کرنے میں وہ حوثیوں کی بھی حوصلہ افزائی کر رہے ہیں۔ لہٰذا صدر ہادی اس معاملے میں فوری اور حتمی تدابیر اختیار کریں۔

جاری کردہ بیان میں پارلیمنٹ نے مجلس الانتقالی الجنوبی کو شہریوں کی سلامتی کو نظر انداز کرنے، خوف و ہراس پھیلانے اور سرکاری اداروں کی فرائض کی بجاآوری میں رکاوٹ بننے کا قصوروار ٹھہرایا ہے۔

بیان میں سعودی عرب سے بھی ریاض سمجھوتے کے مکمل اطلاق کے لئے فریقین پر دباو ڈالنے کی اپیل کی گئی ہے۔

منتخب حکومت کے اہم ترین حامی جنوبی قومی کولیشن نے بھی عدن میں مجلس الانتقالی الجنوبی کی "مسلح بغاوت " کی مذمت کی ہے۔

کولیشن نے مجلس کی حرکت کو احمقانہ قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ یہ قدم صدر کے اختیارات پر کھلا حملہ، حوثیوں کے مفادات کی خدمت اور عدن کی عوامی تحریکوں کو دبانے کی مایوس کن کوشش ہے۔

دوسری طرف ملک کے جنوب میں سب سےبڑے ضلعے حضرموت کے قبیلوں نے مجلس الانتقالی الجنوبی کے اعلانِ خود مختاری کو مسترد کر دیا ہے۔

حضرموت قبائل کی طرف سےجاری کردہ بیان مجلس الانتقالی الجنوبی کے اعلانِ خود مختاری کو رد کیا گیا ہے اور صدر ہادی کی زیرِ قیادت منتخب حکومت کا ساتھ دینے کی اپیل کی گئی ہے۔

بیان میں تمام فریقین سے ریاض سمجھوتے کے اطلاق کے لئے عرب کولیشن  کے ساتھ تعاون کرنے کا مطالبہ بھی کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ یمن میں متحدہ عرب امارات کی حمایت کی حامل مجلس الانتقالی الجنوبی نے ملک کے جنوبی حصے میں اعلانِ خود مختاری کر دیا تھا۔

کل رات سے جنوبی حصے کے فوجیوں اور سکیورٹی فورسز کو ہنگامی حالات اور اعلانِ خود مختاری کے احکامات جاری کر دئیے گئے تھے۔



متعللقہ خبریں