جاسوسی کا الزام :ایران میں گرفتار لبنانی شہری نزار زکا بیروت پہنچ گئے

ایران میں امریکہ کے لیے جاسوسی کے الزام میں قید لبنانی شہری اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ماہر نزار زکا رہا ئی کے بعد گزشتہ  روز بیروت پہنچ گئے ہیں

جاسوسی کا الزام :ایران میں گرفتار لبنانی شہری نزار زکا بیروت پہنچ گئے

ایران میں امریکہ کے لیے جاسوسی کے الزام میں قید لبنانی شہری اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ماہر نزار زکا رہا ئی کے بعد گزشتہ  روز بیروت پہنچ گئے ہیں ۔

انھوں نے بیروت میں اپنی آمد کے بعد ایک اخباری  کانفرنس میں کہا ہے کہ وہ کسی کے ایجنٹ نہیں ہیں اور انھیں ایران میں جھوٹے الزامات کی بنیاد پر گرفتار کیا گیا تھا۔

اخباری  کانفرنس میں ان کے ساتھ لبنان کی  قومی سلامتی   کے سربراہ عباس ابراہیم بھی موجود تھے جن  کے ساتھ  وہ تہران سے طیارے کے ذریعے بیروت پہنچے تھے۔

انھوں نے کہا کہ میں ایک سرکاری دعوت نامے پر گیا تھا لیکن وہاں مجھے اغوا کر لیا گیا تھا۔

 واضح رہے  کہ ایرانی حکومت نے لبنان کی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل حسن نصراللہ کی ثالثی اور درخواست پر نزار زکا کو رہا کرنے کا فیصلہ ہے مگر لبنانی ذرائع کے مطابق ان کی رہائی حکومت کی کوششوں کے نتیجے میں عمل میں آئی ہے۔

نزار زکا کو سپاہِ پاسداران انقلاب ایران نے ریاست کے خلاف جاسوسی کے الزام میں 2015 میں گرفتار کیا تھا جنہیں  جاسوسی کے الزام میں قصور وار قرار دے کر10سال قید اور 42 لاکھ ڈالر جرمانے کی سزا سنائی تھی۔

 



متعللقہ خبریں