اخبارات کی جھلکیاں

20/02/19

اخبارات کی جھلکیاں

***  صدر رجب طیب ایردوان نے  استنبول میں  چھٹی   بوداپسٹ وزارتی کانفرنس      کے سلسلے میں  ایک ضیافتی تقریب سے خطاب  کے دوران کہا کہ  ادلب معاہدے نے   مہاجرین کے بڑے قافلے    کی ترکی آمد کو  فی الوقت روک دیا ہے  مگر ایسا ہوا تو ترکی  اپنے بل بوتے پر ان پناہ گزینوں کی دیکھ بھال نہیں کر سکے گا۔ یہ خبر روزنامہ ینی شفق نے دی ہے جس میں صدر نے مزید کہا کہ   شام مین  دہشتگردوں سے پاک علاقہ ان مہاجرین  کےلیے بہترین  ہوگا  جہاں  ترکی سے واپس لوٹنے والے پناہ گزین بھی  قیام کر سکیں گے۔

 

*** روزنامہ حریت کے مطابق ، معروف ترک پیانو نواز فاضل سائے  نے  جرمن شہر بریمین میں کانسرٹ پیش کیا  جس میں جرمن صدر  فرانک والٹر اشٹائن مائیر     اور ان کی اہلیہ بھی مدعو تھے۔ اس کانسرٹ میں فاضل سائے نے  وولف گینگ آمیڈیئس  موزارٹ،لیونارڈ برن اسٹائن اور جارج  گرشوین  کی  طرزوں کو  پیش کیا ۔

 

***  روزنامہ وطن  کا لکھنا ہے کہ ترکی اور مالدووا کے درمیان گزشتہ روز شناختی کارڈ کے ذریعےمشترکہ   سیاحت کا آغاز  ہو گیا ہے جس سے امید ہے کہ  مالدووئین سیاحوں کی  تعداد 2 لاکھ سے تجاوز  ہو جائے گی   جو کہ گزشتہ سال  1 لاکھ  94 ہزار کے لگ بھگ رہی ہے ۔

 

*** ترک ضلع قارس   اور اردا خان  کی سرحد  پر  واقع    مشرقی ترکی کی  دوسری بڑی جھیل  چالدر     کی سیر کےلیے ملکی و غیر ملکی سیاحوں کا تانتا بندھ  گیا ہے۔ اس جھیل پر  برف کی تہہ 30 تا 50 سینٹی میٹر موٹی ہے جس پر سیاحوں  کو پھسلنے کا  لطف مل رہا ہے۔

 

 



متعللقہ خبریں