طالبان نے چھ صوبوں کے دارالحکمتوں پر قبضہ کرلیا، پیش قدمی جاری

طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ٹویٹ کیا ہے مجاہدین مغربی شہر تالقان، تخار کے مرکز، یونس آباد ، باغ زاخیرہ اورعوازی کے علاقوں میں پہنچ گئے۔ جنگ جاری ہے اور مجاہدین تیزی سے آگے بڑھ رہے ہیں

1688143
طالبان  نے چھ صوبوں کے دارالحکمتوں پر قبضہ کرلیا، پیش قدمی جاری

افغانستان کے چھ صوبے مکمل طور پر طالبان کے کنٹرول میں چلے گئے ہیں جہاں مزاحمت کے بعد افغان سیکیورٹی فورسز نے انخلا کر لیا ہے۔

افغان میڈیا نے تصدیق کی ہے کہ ائیرپورٹ اور پولیس ہیڈ کوارٹر کے گرد لڑائی جاری ہے۔ وہاں کے مقامی میڈیا کے مطابق قندوز شہر کی کئی عمارتوں میں آگ لگی ہے۔

طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ٹویٹ کیا ہے مجاہدین مغربی شہر تالقان، تخار کے مرکز، یونس آباد ، باغ زاخیرہ اورعوازی کے علاقوں میں پہنچ گئے۔ جنگ جاری ہے اور مجاہدین تیزی سے آگے بڑھ رہے ہیں۔

افغان حکام نے تصدیق کی ہے کہ طالبان نے پیر کو شمالی صوبے سرِ پل کے دارالحکومت سرِ پل پر مکمل قبضہ کر لیا ہے جب کہ مقامی فورسز صوبے سے نکل چکی ہیں۔

سرِ پل کے کونسل چیف محمد نور رحمانی کے مطابق افغان فورسز اور طالبان کے درمیان ایک ہفتے تک سرِ پل پر جھڑپوں کا سلسلہ جاری رہا۔ تاہم لڑائی کے دوران حکومت کے حامی کئی مقامی کمانڈروں نے لڑے بغیر ہی طالبان کے سامنے ہتھیار ڈال دیے۔

نور رحمانی نے کہا کہ مقامی کمانڈروں کے ہتھیار ڈالنے کی وجہ سے جنگجوؤں کو پورے صوبے پر کنٹرول حاصل کرنے میں مدد ملی جب کہ لڑائی کے دوران افغان فورسز کو کمک بھی نہیں مل سکی۔

خبر رساں ادارے 'ایسوسی ایٹڈ پریس' کے مطابق طالبان جنگجوؤں کی ایک ویڈیو پیر کو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی ہے جس میں انہیں سر پل کے گورنر آفس کے باہر کھڑے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے جہاں وہ ایک دوسرے کو کامیابی پر مبارک باد دے رہے ہیں۔



متعللقہ خبریں