انڈونیشیا: القدس کے بارے میں امریکی فیصلے کے خلاف احتجاج

دارالحکومت جکارتہ میں القدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے سے متعلق امریکی فیصلے کے خلاف ہزاروں مظاہرین نے احتجاج کیا

869992
انڈونیشیا: القدس کے بارے میں امریکی فیصلے کے خلاف احتجاج

انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ میں القدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے سے متعلق امریکی فیصلے کے خلاف احتجاج کیا گیا۔

انڈونیشیا کی علماء اسمبلی MUI کی طرف سے موناس اسکوائر میں منعقدہ احتجاجی مظاہرے میں ہزاروں افراد نے شرکت کی۔

مظاہرین نے فلسطین کے پرچم اور "القدس مسلمانوں کا ہے"، "ہم فلسطینیوں کے ساتھ ہیں" اور "آزاد فلسطین" کی عبارتوں والے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے۔

مظاہرین نے امریکہ اور اسرائیل کے خلاف نعرے بھی لگائے۔

MUIکے سربراہ معروف امین نے جلوس سے خطاب کیا اور امریکی مصنوعات کے بائیکاٹ کی اپیل کی۔

امین نے  مشرقی القدس کو فلسطین کا دارالحکومت تسلیم کئے جانے والے فیصلے کے ساتھ تعاون کا اظہار کیا اور کہا کہ مسلمانوں کو ہر حالت میں فلسطین کا دفاع کرنا چاہیے ۔

انڈونیشیا کے وزیر برائے مذہبی امور لقمان حکیم سیف الدین نے بھی کہا ہے کہ   انڈونیشیا کی حکومت فلسطین کی آزادی  کی حمایت کرتی ہے۔

مظاہرے میں متعدد جماعتوں اور سول سوسائٹیوں کے نمائندوں نے شرکت کی۔



متعللقہ خبریں