سوڈان، دارالحکومت خرطوم سمیت اطراف کے شہروں مین فوجی انتظامیہ کے خلاف مظاہرے دوبارہ سے شروع

خرطوم  میں فوجی انتظامیہ کے خلاف نعرے بازی کرنے والے مظاہرین نے بیشتر سڑکوں کو رکاوٹیں کھڑی کرتے ہوئے بند کر دیا

1866945
سوڈان، دارالحکومت خرطوم سمیت اطراف کے شہروں  مین فوجی انتظامیہ کے خلاف مظاہرے دوبارہ  سے شروع

سوڈانی دارالحکومت خرطوم اور دیگر شہروں میں فوجی انتظامیہ کے خلاف  گزشتہ چند ہفتوں سے  وقفہ دیے گئے  احتجاجی مظاہرے دو بارہ سے زور پکٹر رہے  ہیں ۔

دارالحکومت خرطوم اور ارد گرد کے شہروں جیسے ، امدرمان اور بحری کے ساتھ ساتھ مغرب میں مدنی اور نیالا میں ہزاروں افراد کہ جن کی اکثریت  نوجوانوں پر مشتمل  تھی،  مزاحمت  کمیٹیوں   کی اپیل پر  سول انتظامیہ کا مطالبہ کرتے ہوئے سڑکوں پر نکل آئے۔

دوسری جانب سیکیورٹی فورسز نے مظاہرین کو ارد گرد کے شہروں اور مضافاتی علاقوں سے دارالحکومت خرطوم اور اہم مقامات کی طرف پیش قدمی سے روکنے کے لیے صدارتی محل اور فوج کے جنرل ہیڈ کوارٹر کی طرف جانے والی سڑکوں پر گاڑیوں کو گزرنے کی اجازت  نہ دی۔

خرطوم  میں فوجی انتظامیہ کے خلاف نعرے بازی کرنے والے مظاہرین نے بیشتر سڑکوں کو رکاوٹیں کھڑی کرتے ہوئے بند کر دیا۔

پولیس نے بعض محلوں میں   مظاہرین  کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس  پھینکی۔

باور رہے کہ اس ملک میں  فوج نے ملکی سلامتی و بقا  کو خطرہ ہونے کے جواز میں 25 اکتوبر کو  سول انتظامیہ پر قبضہ کر لیا تھا اور ملکی میں  ہنگامی  حالت کا نفاذ کرتے ہوئے وزیر اعظم سمیت متعدد سیاستدانو ں کو   حراست میں لے لیا تھا۔

 



متعللقہ خبریں