یوکرین: روس کے زیرِ حراست 144 یوکرینی فوجیوں کو رہا کروا لیا گیا

میں، ایک خوش آئند اور اچھی خبر دینا چاہتا ہوں۔ ہم نے، 144 یوکرینی فوجیوں کو روس کی حراست سے رہا کروا لیا ہے: صدر ولادی میر زلنسکی

1850008
یوکرین: روس کے زیرِ حراست 144 یوکرینی فوجیوں کو رہا کروا لیا گیا

یوکرین کے صدر ولادی میر زلنسکی نے کہا ہے کہ روس کے زیرِ حراست 144 یوکرینی فوجی کو رہا کروا لیا گیا ہے۔

زلنسکی نے ویڈیو پیغام کے ذریعے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ میں، ایک خوش آئند اور اچھی خبر دینا چاہتا ہوں۔ ہم نے، 144 یوکرینی فوجیوں کو روس کی حراست سے رہا کروا لیا ہے۔ رہا کروائے گئے فوجیوں میں سے ایک پولیس اہلکار اور 59 نیشنل گارڈ ہیں، 30 کا تعلق نیوی سے،  28 برّی فوج سے، 17 سرحدی محافظ اور  9 انسدادِ دہشت گردی  فورس سے ہیں ۔

زلنسکی نے کہا ہے کہ رہا کروائے گئے فوجیوں میں سب سے ضعیف العمر 65 سال کا اور سب سے کم عمر 19 سال کا ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ خاص طور پر  آزووسٹال اسٹیل پلانٹ کے 95 محافظ گھروں کو واپس لوٹ رہے ہیں۔ ہم تمام یوکرینیوں کی ان کے گھروں کو واپسی کے لئے جو بن پڑا کریں گے۔

واضح رہے کہ یوکرین وزارت دفاع کے شعبہ خفیہ خبر رسانی نے کل جاری کردہ بیان میں کہا تھا کہ 24 فروری کو جنگ کے آغاز کے بعد سے اب تک روس اور یوکرین کے درمیان سب سے بڑا تبادلہ  ہوا جس کے نتیجے میں آزووسٹال اسٹیل پلانٹ کے 95 محافظوں  سمیت کل 144 یوکرینی فوجیوں کو واپس لے لیا گیا ہے۔



متعللقہ خبریں