روس نے امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے طالبان کو پیسوں کی پیش کش کی ہے: نیویارک ٹائمز

روس نے افغانستان میں امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے طالبان کو پیسوں کی پیش کش کی ہے، سی آئی اے اسمبلی کو بریفنگ دے: نینسی پیلوسی

1446030
روس نے امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے طالبان کو پیسوں کی پیش کش کی ہے: نیویارک ٹائمز

امریکہ کی اسمبلی اسپیکر نینسی پیلوسی نے امریکی خفیہ ایجنسیوں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ، روس کی طرف سے افغانستان میں امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے طالبان کو پیسوں کی پیش کش سے متعلقہ دعووں کے بارے میں اسمبلی کو بریفنگ دیں۔

اطلاع کے مطابق نینسی پلوسی سے مرکزی خفیہ ایجنسی سی آئی اے کی ڈائریکٹر گینا ہاسپیل اور قومی خبر رسانی کے ڈائریکٹر جان ریٹ کلف کو مراسلہ روانہ کیا ہے جس میں انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ موجود شواہد سے اسمبلی اراکین کو آگاہ کیا جائے۔

مراسلے میں پلوسی نے کہا ہے کہ کانگریس کی خفیہ کمیٹیوں کا بنیادی ہدف بیرونی ممالک میں موجود امریکی فوجیوں کے تحفظ کو یقینی بنانا ہے۔ روس کی طرف سے، افغانستان میں موجود امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے، طالبان عسکریت پسندوں کو پیسوں کی پیشکش سے متعلق ذرائع ابلاغ کے  دعوے حیران کن ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ امریکی خفیہ ایجنسیاں اس صورتحال کو ماہِ مارچ سے جانتی ہیں۔ میرا سوال یہ ہے کہ کیا صدر ڈونلڈ ٹرمپ اس سے باخبر ہیں؟ اگر انہیں مطلع نہیں کیا گیا تو کیوں؟ کانگریس کو اور امریکہ کو ان سوالات کے جواب کی ضرورت ہے۔

وائٹ ہاوس کی ترجمان کلیگ  میک اینینی نے کہا ہے کہ خفیہ ایجنسی نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو روس کے امریکی فوجیوں کے قتل کے لئے طالبان کو کرائے کی پیش کش کرنے سے متعلق دعووں سے آگاہ نہیں کیا۔

انہوں نے کہا ہے کہ صدر ٹرمپ کو غیر مصدقہ دعووں کے بارے میں اطلاع نہیں دی جاتی اور مذکورہ خبر بھی غیر مصدقہ ہے۔

واضح رہے کہ روزنامہ نیویارک ٹائمز نے امریکہ خفیہ ایجنسی کے حکام کے حوالے سے شائع کردہ خبر میں دعوی کیا تھا کہ یورپ میں بھی قتل کی ورداتوں میں روسی خفیہ ایجنسی کا ہاتھ ہے اور انہوں نے افغانستان میں بھی امریکی فوجیوں کو قتل کروانے کے لئے طالبان عسکریت پسندوں کو پیسوں کی پیشکش کی ہے۔

خبر میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ معلومات گرفتار ہونے والے طالبان عسکریت پسند سے تفتیش کے دوران حاصل ہوئی ہیں۔



متعللقہ خبریں