سعودی عرب نے عمرے اور مسجدِ نبوی کی زیارت کو بند کر دیا

سعودی عرب نے نیو کورونا وائرس کووِڈ۔19 کی وجہ سے عمرے اور مسجدِ نبوی کی زیارت کو عارضی طور پر بند کر دیا ہے

1367322
سعودی عرب نے عمرے اور مسجدِ نبوی کی زیارت کو بند کر دیا

سعودی عرب نے نیو کورونا وائرس کووِڈ۔19 کی وجہ سے عمرے اور مسجدِ نبوی کی زیارت کو عارضی طور پر بند کر دیا ہے۔

سعودی وزارت خارجہ  کے جاری کردہ اور سرکاری خبر رساں ایجنسی SPA میں شائع بیان میں کہا گیا ہے کہ "وباء پر قابو پانے کے لئے عمرے یا مسجد نبوی کی زیارت کے لئے سعودی عرب میں داخلے ، وائرس کی زد میں آئے ہوئے ممالک سے سیاحتی ویزے کے ساتھ سعودی عرب میں داخلے اور سعودی عرب۔خلیج تعاون کونسل کے رکن ممالک کے شہریوں کے ملک میں داخلے و خروج  کے لئے قومی شناختی کارڈ کے استعمال  کو ممنوع قرار دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے"۔

پاکستان میں بھی کورونا وائرس کے ابتدائی واقعات کا مشاہدہ ہوا ہے۔

پاکستان کے وزیرِ صحت ظفر مرزا  نے ٹویٹر پیج سے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ تقریباً 20 کروڑ آبادی والے ملک میں پہلی دفعہ 2 افراد میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ مریضوں کی حالت تسلی بخش ہے۔

کویت میں کورونا وائرس کی وجہ سے ماہِ مارچ کے پہلے دو ہفتے تعلیمی اداروں کو بند رکھنے کا اعلان کیا گیا ہے۔

حکومتی ترجمان طارق المزرام نے اخباری نمائندوں کے لئے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ کابینہ کے اجلاس میں تمام تعلیمی اداروں میں یکم مارچ سے 2 ہفتوں کے لئے تعطیل کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

کویت وزارت صحت نے بھی ایران کا سفر کرنے والوں کے ساتھ رابطہ رکھنے والے ایک شخص میں کورونا وائرس کی تشخیص کے بعد ملک میں کورونا کے کُل مریضوں کی تعداد کے 26 تک پہنچنے کا اعلان کیا ہے۔

کویت نے گذشتہ دنوں اپنے 800 شہریوں کو ایران  سے نکال لیا تھا۔

لبنان میں کورونا کے مریضوں کی تعداد 2 ہو گئی ہے۔

لبنان وزارت صحت  نے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ 20 فروری  کو ایران کے شہر قُم  جانے والے مسافروں میں سے ایک میں کورونا کی تشخیص ہوئی ہے ۔ مریض کی حالت تسلی بخش ہے۔

دوسری طرف اردن رائل ائیر لائنز نے اٹلی میں وائرس کی وجہ سے 12 افراد کی ہلاکتوں کے بعد عمان۔روم پروا زوں کو منسوخ کر دیا ہے۔

بحرین نے کورونا پر قابو پانے کے لئے عراق اور لبنان  کے لئے تمام دو طرفہ پروازوں  کو روکنے کا اعلان کیا ہے۔

بحرین وزارت صحت نے  اس سے قبل بھی ملک میں کورونا کے کُل مریضوں کی تعداد کے 26 تک پہنچنے کا اعلان کیا تھا۔

عراق میں وباء پر قابو پانے کے لئے 10 دن کے لئے تعلیمی اداروں کو بند کر دیا گیا ہے۔

عراق ہنگامی انتظامیہ نیٹ ورک کی طرف سے جاری کردہ تحریری بیان کے مطابق کووِڈ۔19 وباء کی وجہ سے ملک بھر کی یونیورسٹیوں سمیت تمام تعلیمی اداروں کو 10 دن تک بند رکھا جائے گا۔

علاوہ ازیں سینما گھروں، قہوہ خانوں، تفریحی مراکز اور دیگر سماجی سرگرمیوں کے مقامات کو کل سے 7 مارچ تک بند رکھنے جانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

عراقی شہریوں کے لئے چین،  ایران، جاپان، جنوبی کوریا، تھائی لینڈ، سنگاپور، اٹلی، کویت اور بحرین کا سفر ممنوع قرار دے دیا گیا ہے تاہم ڈپلومیٹک وفود کو اس سے مستثنیٰ رکھا گیا ہے۔

عراق ہنگامی انتظامیہ نیٹ ورک  کے فیصلے کی رُو سے بحرین اور کویت سے بھی عراق میں داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

عراق وزارت صحت نے ایک دن قبل کرکوک میں ایک ہی خاندان کے 4 افراد میں کووِڈ۔19 کی تشخیص کا اعلان کیا تھا۔ یہ کنبہ کچھ عرصہ قبل ایران سے واپس لوٹا تھا۔

جارجیا میں بھی ایک مریض میں کورونا کی تشخیص ہوئی ہے۔

واضح رہے کہ وائرس کی وجہ سے چین میں 2 ہزار 746، ایران میں 19 اور جنوبی کوریا میں 11 ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔



متعللقہ خبریں