یورپی یونین اور رکن ممالک پر بچوں کے حقوق نظرانداز کیے جا نے کا الزام

یورپی یونین کے درالحکومت  برسلز میں  میں78 بچوں کی تنظیموں  کی جانب سے جاری کردہ مشترکہ اعلامیے میں  یورپی یونین میں بچوں  کے حقوق کی مسلسل خلاف ورزی کیے جانے پا الزام لگایا گیا ہے

620825
یورپی یونین اور رکن ممالک پر بچوں کے حقوق نظرانداز کیے جا نے کا الزام

یورپی یونین اور  اس کے رکن ممالک  پناہ  گزین   بچوں کے حقوق کی خلاف ورزی  کرنے   اور ان کے تحفظ   کے بارے میں بڑی حد تک اقدامات اٹھانے سےقاصر ہیں۔  

یہ تنقید  اقوام متحدہ  کے بچوں سے متعلق  امدادی فنڈ یونیسف   اقوام متحدہ کے پناہ گزینوں سے متعلق  ہائیم کمشنر  اور سیو دی چلڈرن  سمیت 78 انسانی حقوق کی تنظیموں نے کی ہے۔

یورپی یونین کے درالحکومت  برسلز میں  میں78 بچوں کی تنظیموں  کی جانب سے جاری کردہ مشترکہ اعلامیے میں  یورپی یونین میں بچوں  کے حقوق کی مسلسل خلاف ورزی کیے جانے پا الزام لگایا گیا ہے۔

اعلامیے میں  بچوں کے   یورپ بھر میں مسلسل نظر انداز کیے جانے   اور مشکل اور کھٹن حالات  میں زندگی بسر کیے جانے پر مجبور  کیا گیا ہے  اور ان کو  صحت اور   تعلیم کی بنیادی ضروریات سے بھی محروم رکھا گیا ہے۔

یورو پول  ابھی تک لاپتہ  دس ہزار پناہ گزین بچوں کو ڈھونڈنے میں ناکام رہی ہے ۔

لاپتہ ہونے والے بچوں کے  انسانی تاجروں کے ہاتھوں لگنے کا  خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

یوروپول لاپتہ ہونے والے بچوں  کے  یورپ میں مختلف جھتوں      کی جانب سے   اپنے مقاصد  کے لیے استعمال کرنے  اور  جنسی  غلامی پر مجبور کیے        کے بارے میں  متنبہ کیا ہے۔

 



متعللقہ خبریں