سعودی عرب کو اسلحہ کی برآمدات روک دی گئی ہے، جرمن چانسلر

استنبول  میں سعودی قونصلیٹ جنرل میں جو سانحہ پیش آیا ہے یہ  کتنا بھیانک ہے

سعودی عرب کو اسلحہ کی برآمدات  روک دی گئی ہے، جرمن چانسلر

جرمن چانسلر انگیلا مرکل  کا کہنا  ہے کہ "خاشقجی واقع کے آشکار ہونے تک سعودی عرب  کو اسلحہ کی برآمدات نہیں کی جائیگی۔"

مرکل  نے صوبہ ہیسین میں انتخابی مہم کے تحت اپنی سیاسی جماعت کے کارکنان  سے خطاب  میں سعودی صحافی جمال خاشقجی کےقتل کے بارے میں کہا  کہ "استنبول  میں سعودی قونصلیٹ جنرل میں جو سانحہ پیش آیا ہے یہ  کتنا بھیانک ہے۔  میں اس  چیز کو زور دیتے ہوئے واضح کرنا چاہتی ہوں کہ اس واقع کے حقائق کو آشکار کیا جانا چاہیے اور  جب تک ایسا نہ کیا گیا سعودی عرب کو ہتھیاربرآمد نہیں کیے جائینگے۔"

واضح رہے کہ سعودی عرب ، جرمنی کی جانب سے رواں سال کے آغاز سے ابتک الجزائر کے بعد سب سے زیادہ اسلحہ فروخت کیا جانے  والا دوسرا ملک ہے،  امسال  جرمنی نے سعودی عرب کو تقریباً 417 ملین ڈالر کا اسلحہ  فروخت کیا ہے۔

 



متعللقہ خبریں