ادلب پر حملہ ہوا تو نیا انسانی المیہ پیدا ہوجائے گا: یورپی یونین

یورپی  یونین کے خارجہ تعلقات کی نمائندہ  فیدیریکا موگیرینی نےاقوام متحدہ کے شام کے خصوصی ایلچی اسٹیفن ڈی مستورا سے ٹیلیفون پر بات چیت کے دوران کہا کہ ادلب پر فوجی کشی کے نتیجے میں  ایک نیا انسانی المیہ رونما ہو سکتا ہے

ادلب پر حملہ ہوا تو نیا انسانی المیہ پیدا ہوجائے گا: یورپی یونین

 یورپی  یونین کے خارجہ تعلقات کی نمائندہ  فیدیریکا موگیرینی   نے  ادلب پر فوجی کشی کے نتیجے میں  ایک نیا انسانی المیہ رونما ہو سکتا ہے۔

انہوں نے یہ بات  اقوام متحدہ کے شام کے  خصوصی ایلچی   اسٹیفن ڈی مستورا سے ٹیلیفون پر بات چیت کے  بعد ایک بیان میں  کہی ۔

موگیرینی نے کہا کہ  اس وقت  ادلب میں کشیدگی بڑھنے کا خطرہ ہے  جسے روکنے کےلیے   فوری اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے وگر   فوج کشی کا ارادہ رکھنے والے   اس کے ذمے دار ہونگے۔

  انہوں نے  کہا کہ  ادلب پر کسی ممکنہ حملے کے نتیجے میں   30 لاکھ سے زائد  شہریوں کی زندگیاں خطرے   سے دوچار ہونگی  جس سے ایک نیا انسانی المیہ رونما ہوگا لہذا یورپی یونین اس مسئلے کے پُر امن حل کےلیے  اقوام متحدہ  سے  تعاون جاری رکھے گی ۔



متعللقہ خبریں