سعودی عرب نے مشترکہ ورکنگ گروپ تشکیل دینے کی پیشکش کی ہے، ترجمان صدر

مشترکہ ورکنگ گروپ لاپتہ سعودی صحافی خاشقجی کے واقع کے حقائق کو منظر عام پر لانے کی کوشش کرے گا

سعودی عرب نے مشترکہ ورکنگ گروپ تشکیل دینے کی پیشکش کی ہے، ترجمان صدر

صدارتی ترجمان ابراہیم قالن  کا کہنا ہے کہ سعودی عرب  کی پیشکش پر جمال خاشقجی  واقع کو آشکار کرنے  کے لیے مشترکہ ورکنگ گروپ تشکیل دیے جانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

ابراہیم قالن نے 2 اکتوبر کوسعودی عرب کے استنبول  قونصل خانے  کو جانے کے بعد کوئی اطلاع نہ ملنے والے امریکی روزنامہ واشنگٹن پوسٹ کے  کالم نگار جمال خاشقجی  کے بارے میں  ایک اعلان جاری کرتے ہوئے  کہا کہ " ترکی اور سعودی عرب کے مابین تعاون کے دائرہ کار میں اور سعودی عرب کی پیشکش کو مد نظر رکھتے ہوئے  ایک مشترکہ  ورکنگ گروپ   تشکیل دیا جائے گا جو کہ اس واقع کے حقائق کو منظر عام پر لانے کی کوشش کرے گا۔

خیال رہے کہ سعودی انتظامیہ نے اس سے قبل استنبول کے قونصل خانے  کی تلاشی کی اجازت دے دی تھی۔

سعودی اصلاح پسندوں کے لیے ایک  اہم پلیٹ فارم  کی حیثیت رکھنے والے روزنامہ الا وطن کے لیے اہم سطح کی خدمات فراہم کرنے والےا ور مشرقِ وسطی کے با اثر صحافیوں میں شمار کیے جانے والےجمال خاشقجی  دو اکتوبر کو اپنی  منگیتر کے ہمراہ استنبول میں سعودی قونصل  خانے کو گیا تھا جس کے بعد اس کا کوئی اتا پتہ  نہیں۔

 



 



متعللقہ خبریں