پاکستان ڈائری - 29

جنرل الیکشن کی تاریخ جوں جوں قریب آرہی پاکستانی پولٹیکل ورکرز کا جنون بڑھتا جارہا ہے ۔ہر پارٹی کے امیدواروں،ورکرز اور سوشل میڈیا ٹیم کی پوری کوشش ہے کہ عوام کو متاثر کرکے ووٹ پکے کر لئے جائیں

پاکستان ڈائری - 29

پاکستان ڈائری -29

جنرل الیکشن کی تاریخ جوں جوں قریب آرہی پاکستانی پولٹیکل ورکرز کا جنون بڑھتا جارہا ہے ۔ہر پارٹی کے امیدواروں،ورکرز اور سوشل میڈیا ٹیم کی پوری کوشش ہے کہ عوام کو متاثر کرکے ووٹ پکے کر لئے جائیں ۔جہاں ایک طرف ٹی وی پر اشتہارات چل رہے ہیں وہاں دوسری طرف فیس بک ٹویٹر پر پارٹی کے اچھے کاموں کی تشہیر کی جارہی ہے۔

الیکشن کمپئین کے لئے بنائے گئے دفاتر میں پارٹی نغمے گونج رہے ہیں چائے مٹھائی اور بریانی کا خاص اہتمام ہے ۔اس کے ساتھ پارٹی لیڈران کے پوسٹر، سٹیکر ،بیج ، بینڈ، کیپ اور جھنڈے بھی عوام میں تقسیم کئے جارہے ہیں ۔

بے نظیر کے پہلے دور حکومت سے جیالوں میں یہ چیز عام تھی کہ وہ اپنی پارٹی کے جھنڈے کے رنگ کا لباس پہنا کرتے تھے ان کے کپٹروں پر بھی پی پی پی کا جھنڈا بنا ہوتا تھا۔بے نظیر بھٹو کے بچے بلاول ، بختاور اور آصفہ بھی  بچین میں نانا ذوالفقار علی بھٹو اور پی پی کے جھنڈے والی پرنٹ والی شرٹس پہنتے تھے ۔محترمہ بے نظیر بھٹو  کی شہادت کے بعد بھی ان کے بچے اکثر پی پی پی کے جھنڈے کی طرز کے لباس میں نظر آتے رہے ہیں ۔

تاہم فیشن انڈسٹری میں پولٹیکل کولیکشن لانچ کرنے کا سہرا ماہین کاردار کو جاتا ہے 2013 میں عمران خان نیشن قمیض کرتا لائن متعارف کروائی جس کو عوام میں بہت پذیرائی ملی۔اب دو ہزار اٹھارہ کے الیکشن میں بہت سے ڈیزائنرز اور سیاسی جماعتیں خود اپنے لیڈران کی تصاویر والی قمیض اور شرٹس بنا رہی ہیں ۔حنا بٹ مسلم لیگ ن کی سابق ایم پی اے ہیں انہوں نے اپنے فیشن برینڈ ٹینا میں مریم نواز اور نواز شریف کی تصاویر سے مزین کولیکشن متعارف کروائی ہے جس میں پنک رنگ کی شرٹ کو بہت پذیرائی ملی ہے ۔

دوسری طرف تحریک انصاف نے اپنی آفیشل ویب سائٹ پر عمران خان ٹی شرٹس، کرتا ، سکارف اور کیپس متعارف کروائی ہیں جس میں آپ تحریک انصاف کے لیڈر علی زیدی کو بھی اس کولیکشن میں ملبوس دیکھ سکتے ہیں ۔پاکستان کے معروف ڈیزائنر آصفہ نبیل کی کولیکشن کی خاص بات یہ کہ انہوں نے دو بڑی جماعتوں تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن کے فینز اور کارکن کے لئے کولیکشن لانچ کی ہے۔ان کے آن لائن سٹور پر یہ قمیض مرد اور خواتین کے لئے دستیاب ہیں۔

امبرین نوائے وقت کے ساتھ منسلک ہیں اور فیشن لائف اسٹائل کور کرتی ہیں ٹی آر ٹی سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارے ڈیزائنرز جشن آزادی اور مختلف موقعوں کی مناسبت سے کولیکشن لانچ کرتے ہیں اس ہی حوالے سے الیکشن پر بھی کولیکشن آئی ہے ۔نوجوان کے لئے الیکشن کے حوالے سے خوش و خروش زیادہ ہے وہ اس دن کو بھرپور طریقے سے منائیں گے۔اس ہی وجہ ڈیزائنرز کپڑے بنارہے ہیں کیونکہ ہم جلسوں میں دیکھتے ہیں کہ کارکنوں نے فیس پینٹ کررکھا ہوتا ہے اور جھنڈے لپیٹے ہوئے ہوتے ہیں ۔اس لئے عمران خان نواز شریف مریم نواز اور بلاول کی تصاویر والے لباس بنائے جارہے ہیں ۔ماہین کاردار نے پی ٹی آئی اور حنا بٹ نے مسلم لیگ ن کے لئے پریٹ کولیکشن متعارف کروائی۔آصفہ نبیل نے دونوں جماعتوں کے لئے کولیکشن لانچ کی ۔

وہ کہتی ہیں کہ ووٹ دینے کے ساتھ اب الیکشن کو تہوار کے طور پر منایا جاتا ہےوہ کہتی ہیں کہ سیاسی لباس ضرور پہنیں لیکن ایک دوسرے کے ساتھ جھگڑا نا کریں ۔امبرین فاطمہ کہتی ہیں ڈیزائنر وئیر اب سب کی پہنچ میں ہے کیونکہ اب قیمتیں مناسب ہیں آصفہ نبیل کے پریٹ کی قیمت  2300 ہیں جوکہ متوسط طبقے کی دسترس میں ہےامبرین کہتی ہیں کہ مارکیٹ میں جلد رپلیکا بھی آجاتا ہے جوکہ ڈیزائنرز کے ساتھ زیادتی ہے اس سے فیشن انڈسٹری سفر کرتی ہے



متعللقہ خبریں