عالمی ذرائع ابلاغ

17/08/18

عالمی ذرائع ابلاغ

***امریکی   ایسو سی ایٹڈ  پریس     نے وزیر خارجہ مولود چاوش اولو  کے بیان کو جگہ  دی جس میں انہوں نے کہا  کہ   ترکی پر پابندیوں اور دباو سے امریکہ  کو کچھ حاصل نہیں  ہوگا۔

 

*** روسی خبر رساں ایجنسی  کےمطابق ،  روسی صدارتی ترجمان  دیمتری  پیسکوف نے  بتایا  ہے کہ    ترک صدر ایرودان  روسی ہم منصب  پوٹین سے   کچھ عرصہ قبل   ٹیلی فون باتچیت  کے دوران کسی قسم کی  اقتصادی مدد کا مطالبہ نہیں کیا ۔

 

*** برطانوی رائیٹرز   ایجنسی نے خبر دی ہے کہ   ترک وزیر خزانہ  برات البیراق  نے   امریکی پابندیوں کے خلاف جرمن وزیر   کی حمایت   کا شکریہ  ادا کیا اور کہا کہ  اس بیان سے    جرمنی اور یورپی یونین پر ترکی  کا اعتماد  مزید  بڑھے گا۔

*** فرانسیسی  اے ایف پی   ایجنسی  نے ترک صدارتی ترجمان ابراہیم قالن   نے ٹویٹر  پر  اپنے پیغام میں   کہا کہ ترک معیشت  کی  بنیادیں  مضبوط ہیں  لہذا عوام   افواہوں پر یقین نہ کریں ۔

 

***روس کی  خبر رساں ایجنسی  ریا نووستی   نے  صدر ایرودان کے بیان  کو جگہ دی ہے   جس میں انہوں نے  کہا کہ  ترکی کے خلاف  سازشوں   کا سلسلہ تاحال جاری ہے۔

 

*** برطانوی  بی بی سی   نے خبر دی ہے کہ  برطانیہ میں ترک لیرے کی خریداری  میں  جوش و خروش پایا جاتا ہے  جس میں  تکری کی سیر کو جانے والے سیاح بھی شامل ہیں۔

 

***سی این این  میڈیا نے  بتایا ہے کہ  ترک وزیر خزانہ برات البیراق نے  جرمن  وزیر خزانہ  اولاف شولز سے  رابطہ کیا    جس میں فیصلہ کیا گیا   کہ  دونوں وزرا 21 ستمبر کو  برلن میں ملاقات کریں گے۔

*** ایران کی خبر رساں ایجنسی  ایرنا  کے مطابق  قطر ،کویت اور عراق نے امریکی پابندیوں کے خلاف ترکی کی حمایت کا اعلان کیا ہے ۔

 روسی   خبر رساں ایجنسی   اسپوتنک   کا لکھنا ہے کہ  صدر ایردوان نے  فرانسیسی ہم منصب ایمانویل ماکروں سے ٹیلیفون پر رابطہ کیا  جس میں  دو طرفہ  اقتصادی تعلقات  کا جائزہ لیا گیا ۔

 

 



متعللقہ خبریں