اسلام کے خلاف نازیبازبان ،مسلم باکسر نےآئرش حریف سے بدلہ رنگ میں لےلیا

داغستان کے مسلم  باکسر حبیب نورماگو میدوف نےآئرش باکسر  میک گریگر  کو امریکی شہر لاس ویگاس  میں  اسلام   کے خلاف نازیبا زبان کے استعمال کا  مزہ چکھاتے ہوئے چوتھے ہی راونڈ میں چت کر دیا

2018-10-07T053507Z_740632313_NOCID_RTRMADP_3_MMA-UFC-229-NURMAGOMEDOV-VS-MCGREGOR.JPG
2018-10-07T050736Z_620238319_NOCID_RTRMADP_3_MMA-UFC-229-NURMAGOMEDOV-VS-MCGREGOR.JPG

 داغستان کے مسلم  باکسر حبیب نورماگو میدوف   نے  آئرش باکسر  میک گریگر  کو امریکی شہر لاس ویگاس  میں  اسلام   کے خلاف نازیبا زبان کے استعمال کا  مزہ چکھا دیا ۔

 لاس ویگاس میں  cage kick boxing  کے  ایک مقابلے میں آئرش باکسر   میک گریگر  نے داغستانی باکسر حبیب  نورما گو میدوف کے  سامنے اسلام مخالف نازیبا زبان استعمال اور  اور اسے دہشتگرد  کہا۔

  اس بات پر طیش میں آتےہوئے نورما گومیدوف نے اس نازیبا  زبان  کا  بدلہ   اپنے حریف   سے  اکھاڑے میں لیا  اور اُسے چوتھے ہی راونڈ میں چت کردیا ۔

مقابلے کے بعد بھی   آئرش باکسر  اور اس  کی باقی ٹیم  نے   داغستانی باکسر کا پیچھا نہ چھوڑا اور  فقرے کسنا جاری رکھاجس  پر اُس نے دوبارہ اُن کی درگت بنا ڈالی ۔

مقابلے میں  کامیابی کی خوشی میں  داغستان میں عوام سڑکوں پر نکل آئی اور   حبیب نورماگو میدوف        کی مسلسل 27 ویں  فتح  کا جشن منایا ۔

 

 



متعللقہ خبریں