آزادی کپ کے لیے تمام تر تیاریاں مکمل، پاکستان

تینوں میچ  لاہور میں اور 12، 13  اور 15  ستمبر کو  کھیلے جائینگے اور ہر میچ شام  7 بجے شروع ہو گا

آزادی کپ کے لیے تمام تر تیاریاں مکمل، پاکستان

پاکستان میں انٹر نیشنل کرکٹ  کی بحالی کی  راہ میں  ایک اہم قدم اٹھایا جا رہا ہے۔  پاکستان آزادی  کپ  کے انعقاد میں  اب  صرف ایک دن باقی  بچا ہے۔

تین  ٹی ۔20 میچوں پر مشتمل اس ٹورنا منٹ میں شرکت کے لیے  7 ممالک کے کھلاڑیوں پر مشتمل ورلڈ الیون کی ٹیم دبئی سے لاہور کے علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئر پورٹ پہنچی جہاں پر  چیرمین پی سی بی نجم سیٹھی سمیت کرکٹ بورڈ کے اعلیٰ حکام  اور عوام نے   ان کا پرتپاک طریقے سے  استقبال کیا۔

نجم  سیٹھی  کا کہنا  ہے کہ  اب کے بعد  کرکٹ کھیلنے والے ملکوں کے ساتھ ہماری ہوم سیریز   کو پاکستان میں ہی کھیلے جانے  کی راہ  ہموار ہو گی، جس سے  نہ صرف کرکٹ بلکہ پاکستان  کی ساکھ بھی بلند ہو گی۔

 تینوں میچ  لاہور میں اور 12، 13  اور 15  ستمبر کو  کھیلے جائینگے اور ہر میچ شام  7 بجے شروع ہو گا۔

مہمان ٹیم کی قیادت فاف ڈوپلیسی کررہے ہیں، دیگرکرکٹرز میں ہاشم آملا، سیموئل بدری، جارج بیلی، پال کولنگ ووڈ، بین کٹنگ، گرانٹ ایلوئٹ، تمیم اقبال، ڈیوڈ ملر، مورن مورکل، ٹم پین،  تھشارا پریرا، ڈیرن سیمی اورعمران طاہر شامل ہیں۔

قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ ورلڈ الیون کیخلاف تینوں میچ جیتنے کے لیے ہم  میدان میں اتریں گے،  ٹی ۔20 کے مایہ  ناز کھلاڑیوں پر مشتمل  مہمان اسکواڈ خاصا مضبوط ہے، ہم  ٹی۔ 20 عالمی کپ کے لیے  بہترین ٹیم  تشکیل دینے  کی کوشش میں ہیں۔

ورلڈ الیون ٹیم کی قیادت کرنے والے کپتان فاف ڈیوپلیسی کا کہنا ہے کہ وہ پاکستان میں صرف کرکٹ کے لیے نہیں بلکہ اس سے بڑھ کر  کچھ ہونے  کے لیے  یہاں  کھیلنے آئے  ہیں۔

انہوں نے بتایاکہ "پاکستان میں  کھیلنا میرے لیے ایک  اعزاز کی بات ہے،  پاکستان میں کرکٹ کی بحالی میں اپنا کردار ادا کر نے   میں  مجھے  بہت  خوشی ہے۔پاکستان میں زبردست استقبال پر انہوں نے پاکستانی عوام کا شکریہ بھی ادا کیا۔

 



متعللقہ خبریں