ترکی کے اخبارات سے جھلکیاں

12.10.18

ترکی کے اخبارات سے جھلکیاں

روزنامہ صباح "عراق میں چاوش اولو کی جانب سے اہم اعلانات" کے زیر ِ عنوان اپنی خبر میں لکھتا ہے کہ سرکاری مذاکرات  کی غرض سے عراق تشریف لیجانے والے وزیرِ خارجہ میولود چاوش اولو نے اہم اعلانات کیے ۔ انہوں نے کہا کہ"اس سے قبل سیکورٹی فقدان کے باعث  مجبوراً بند کیے جانے والے بصرہ اور موصل قونصل  خانوں کو دوبارہ سے فعال  بنایا جا رہا ہے۔"   چاوش اولو نے بتایا  کہ دہشت گرد جہاں  کہیں پر بھی کیوں نہ ہو ترکی عالمی قوانین کے دائرہ کار میں دہشت گرد ی کے  خلاف جنگ کو جاری رکھے گا، یہ چیز عراقی سرحدوں کی خلاف ورزی کا معنی نہیں رکھتی اور  عالمی قوانین کے مطابق  ہے۔

روزنامہ حریت " تین سالوں بعدجاری  توازن  میں ماہ اگست میں پہلی   بار اضافہ " عنوان کے تحت لکھتا ہے کہ جاری  حساب امور کے توازن نے تین سال کے بعد   ماہ اگست میں 2٫6 ارب ڈالر  کا اضافہ حاصل کیا ہے تو رواں سال جنوری تا اگست کا جاری  حساب خسارہ 30٫6 ارب ڈالر تک رہا ہے۔ جمہوریہ ترکی کے مرکزی بینک   نے اگست 2018  کے دورانیہ پر محیط ادائیگی بیلنس اعداد و شمار کا اعلان کر دیا ہے۔  جس کے مطابق 12 ماہ کا جاری حساب خسارہ 51 ارب 125 ملین ڈالر کی سطح تک گر گیا ہے۔ کرنٹ اکاؤنٹ  فاضل مقدار   میں،  خارجہ تجارت خسارے   میں ایک برس قبل کے اسی ماہ کے مقابلے میں 3 ملین 65  ہزار  کی کمی بار آور ثابت ہوئی ہے۔

روزنامہ وطن "مقامی بم   لانچر فوجی چھاؤنیوں کو منتقل"  جلی سرخی لگاتے ہوئے اپنی خبر میں لکھتا ہے کہ  سیکورٹی قوتوں  کی بم لانچر کی ضرورت  کو پورا  کرنے کی خاطر دفاعی صنعت  کی ڈائریکٹریٹ کے  زیرِ اہتمام  جاری کردہ  ٹینڈر میں شرکت کرنےو الی قونیا کی ایک اسلحہ فیکٹری  بری افواج کے لیے 8 ہزار  کے بعد بم لانچنگ پیڈز کو بری افواج کے ہیڈکوارٹر میں تعینات ترک فوجیوں   کے  حوالے کر دیا جائیگا۔  منفرد ڈیزائن کے  حامل اس  بم لانچنگ  پیڈ  کے لیے قومی اور بین الاقوامی سطح پر پیٹنٹ   کے حصول کی خاطر درخواستیں جمع کر ادی گئی ہیں۔

روزنامہ سٹار "ترک دفاعی منصوعات کی امریکی میں نمائش" عنوان کے تحت لکھتا ہے کہ ترکی دفاعی صنعت کی ممتاز فرموں راکٹ سان اور ریپ کون  نے واشنگٹن میں  لگائی گئی آؤسا 2018  نمائش میں اپنی مصنوعات اور صلاحیتوں کے بارے میں آگاہی کرائی گئی ہے۔  کئی  ملکوں  کی  بین الاقوامی فرموں نے راکٹ سان کے اسٹال کا دورہ کرتے ہوئے، فرم کی ٹیکنالوجی  اور  اس کی مصنوعات کے  بارے میں معلومات  حاصل کیں۔

روزنامہ خبر ترک "ترک ٹھیکہ دار خطہ افریقہ کی نشاطِ نو کر رہے ہیں" زیر عنوان لکھتا ہے کہ بیرون  ملک تعمیراتی کاموں کاآغاز لیبیا سے کرنے والے ترک ٹھیکہ داروں کا پورے خطہ افریقہ میں سر انجام دیے گئے عظیم منصوبوں کی   بدولت  چرچا ہو رہا ہے۔ انہوں نے گزشتہ 4 برسوں میں افریقہ میں 15 ارب  ڈالر کے قریب  ریلوے، شاہراہوں، بند رگاہوں، پلوں اورٹنلز کی طرح کے  بڑے منصوبوں کو پایہ تکمیل تک پہنچایا ہے۔

 

 



متعللقہ خبریں